The news is by your side.

Advertisement

بھارت جموں وکشمیر کے عوام کو آپس میں لڑانا چاہتا ہے: وزیراعظم آزاد کشمیر

مظفرآباد: وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ محمد فاروق حیدر کا کہنا ہے کہ بھارت جموں وکشمیر کے عوام کو آپس میں لڑانا چاہتا ہے، ہمیں کسی فکری اور نظریاتی انتشار کا شکار نہیں ہونا۔

وزیراعظم آزاد کشمیر فاروق حیدر کا یکجہتی کشمیر جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ دشمن ہمیں تقسیم کرنا چاہتا ہے، ہم وزیراعظم عمران خان کی کال کے منتظر ہیں، مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت تبدیل کرکے بھارتی حکومت مہاجر ہندوﺅں کو اسٹیٹ سبجیکٹ دیکر وہاں آبادی کا تناسب تبدیل کرنا چاہتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سلامتی کونسل کی مسئلہ کشمیر پر گیارہ قراردادیں موجود ہیں، کانگریس ہندوستان کا چہرہ اور بی جے پی اس کا دماغ ہے، آر ایس ایس کی آئیڈیالوجی سے دنیا کے امن کو شدید خطرہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس جلسے کے اردگرد 800 لوگوں تحریک آزادی کشمیر کے مجاہدوں کی قبریں ہیں، کشمیری صرف رائے شماری کا مطالبہ کرتے ہیں، بھارت طاقت کے بل بوتے پر ان کو دبانے کی ناکام کوشش کررہا ہے۔

مقبوضہ کشمیر میں حالات کنٹرول سےباہرہونے سے پہلےعالمی برادری مداخلت کرے، وزیراعظم

انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کے دلوں سے موت کا خوف ختم ہو چکا ہے، وہ 8لاکھ سے زائد قابض افواج کا مقابلہ کررہے ہیں، ہم وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی کال کے منتظر ہیں، ریاستی باشندوں کو آرپار جانے کے لیے کوئی پابندی نہیں ہے۔

راجہ فاروق حیدر کا مزید کہنا تھا کہ آزادکشمیر کے عوام خونی لکیر کو ختم کرنا چاہتے ہیں، بھارت مقبوضہ کشمیر میں نسل کشی کے منصوبے پر عمل پیرا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں