The news is by your side.

Advertisement

کشمیریوں پر مظالم ڈھانے والے بھارتی فوجی خودکشی کرنے لگے

سری نگر : مقبوضہ کشمیر میں مظالم ڈھانے والے بھارتی فوجی خودکشی پر مجبور ہونے لگے ،مقبوضہ کشمیرکے علاقے اننت ناگ میں بھارتی فوج افسرنے سرکاری اسلحے سے خودکشی کرلی، بھارتی فوجی سی آرایف پی میں کمانڈنٹ تھا۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں تعینات ایک اور بھارتی فوجی نے خود کشی کر لی ، مقبوضہ کشمیرکے علاقے اننت ناگ میں تعینات سی آر پی ایف کے ایک 33 سالہ اسسٹنٹ کمانڈنٹ نے خود کشی کر لی ۔

ایم اروند نامی بھارتی فوجی افسر نے اپنے سروس اسلحے سے خود کو گولی مار کر خودکشی کی۔

بھارتی حکام کے مطابق 40 ویں بٹالین کے ایم اروند جمعہ کی شام ضلع اسلام آباد میں اپنے گھر میں مردہ حالت میں پائے گئے، انھوں نے 2014 میں سنٹرل ریزرو پولیس فورس میں براہ راست انٹری افسر کی حیثیت سے شمولیت اختیار کی تھی۔

مزید پڑھیں : بھارتی آرمی افسر کی مقبوضہ کشمیرمیں پوسٹنگ کے خوف سے خودکشی ؟

واضح رہے کہ سال 2018 کے دوران 80 بھارتی فوجی اہلکاروں نے خود کشی کی جبکہ جنوری 2007 سے اب تک مقبوضہ کشمیر میں خود کشی کرنے والے بھارتی اہلکاروں کی تعداد 440 ہوگئی ہے۔

یاد رہے جولائی مین بھارت میں ریلوے ٹریک سے ملنے والی آرمی افسر کی لاش معمہ بن گئی تھی ، مقامی انتظامیہ تاحال یہ طے کرنے سے قاصر ہے کہ آیا اس افسر نے خود کشی کی ہے یا اسے قتل کیا گیا ہے ۔

بتایا جارہا تھا کہ کیپٹن پوری کی پوسٹنگ بھارتی مقبوضہ جموں اور کشمیر کے علاتے پلواما میں کردی گئی تھی جس کے سبب وہ خوش نہیں تھا اور وہاں نہیں جانا چاہتا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں