The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشت گردی، مزید 2 نوجوان شہید

سری نگر: مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی فورسزکی دہشت گردی عروج پرہے، بھارتی فوج نے کلگام میں مزید دو بے گناہ نوجوانوں کو شہید کردیا۔

کشمیر میڈیا سروس کی رپورٹ کے مطابق بھارتی فوج نے کلگام کے علاقے میں گھر گھر تلاشی کے دوران دو نوجوانوں کو گھروں سے باہر نکال کر پہلے تشدد کا نشانہ بنایا اور پھر انہیں شہید کردیا۔

نوجوانوں کی شہادت کی خبر سُن کر اہل علاقہ احتجاج کے لیے باہر نکلے تو بھارتی فوج نے علاقے میں کرفیوں نافذ کردیا اور مظالم کو چھپانے کے لیے انٹرنیٹ و موبائل سروس بھی بند کردی جبکہ علاقے میں اضافی نفری بھی تعینات کردی گئی۔

مقبوضہ کشمیرمیں گزشتہ چند روزمیں سات کشمیری نوجوانوں کوشہید کیا گیا، مقبوضہ وادی کے مختلف علاقوں میں بھارتی مظالم کیخلاف احتجاج کیاجارہاہے۔

مزید پڑھیں: رمضان المبارک میں بھارتی مظالم میں‌ تیزی، 2 ہفتوں میں 12 کشمیری نوجوان شہید

یاد رہے کہ 19 مئی کو کشمیر میں تعینات بھارتی فوجی افسر نے انکشاف کیا تھا کہ رمضان المبارک کے آغاز کے بعد سے فورسز نے 2 ہفتوں کے دوران مختلف علاقوں میں کارروائی کرتے ہوئے 12 کشمیریوں کو ریاستی دہشت گردی کا نشانہ بنایا، ماہِ مبارک کے آغاز سے اب تک 15 کے قریب بے گناہ نوجوانوں کو شہید کیا گیا۔

بھارتی فوج نے بھی کشمیر کے جنوبی اور شمالی علاقوں میں کیے جانے والے سرچ آپریشن اور نوجوانوں کی شہادت کی تصدیق کی۔ سرکاری اعداد وشمارکے مطابق ان نوجوانوں کو10 سے 18 مئی کے دوران محاصرے اور سرچ آپریشن کے نام پر 6 نام نہاد کارروائیاں کر کے شہید کیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں