The news is by your side.

Advertisement

آریان خان کیس: بھارتی صحافی نے مودی سرکار کو آئینہ دکھا دیا

دہلی: بھارتی صحافی برکھا دت نے آریان خان کی گرفتاری اور کیس پر مودی سرکار کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کو لکھے گئے اپنے مضبون میں بھارتی صحافی نے کئی سوالات بھی کھڑے کردیے، ان کا کہنا ہے کہ بھارت کی جیلوں میں زیادہ تعداد مسلمانوں اور دلتوں کی ہے۔

برکھا دت نے بھارتی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے لکھا کہ غربت، تعصب، ذات، طبقہ اس بات کا تعین کرتا ہے کہ کون جیل جائے گا اور کتنی دیر تک رہے گا۔

انہوں نے کہا بالی ووڈ اسٹار شاہ رخ خان اور ان کے بیٹے آریان خان نے مودی سرکار کو حقیقی مسائل سے عوام کی توجہ ہٹانے کا بہانہ فراہم کردیا ہے۔

صحافی کا کہنا تھا کہ آج بھارت میں اگر کسی مسلمان پر کوئی الزام لگ جائے تو مشتعل ہجوم کا رد عمل نفرت انگیز اور متعصبانہ ہوتا ہے، تعصب رکھنے والے ایسے لوگ خود کو زیادہ طاقت ور بھی محسوس کرتے ہیں۔

آریان خان پابندی سے منشیات استعمال کرتے ہیں، واٹس ایپ چیٹ میں‌ انکشاف

یاد رہے کہ بھارتی نارکوٹکس کنٹرول بیورو نے شاہ رخ خان کے بیٹے آریان خان کو دو اکتوبر کی رات بحری جہاز پر منعقد ہونے والی ریو پارٹی پر اچانک چھاپہ مار کر گرفتار کیا تھا، چھاپے کے دوران اہلکاروں نے آریان خان اور ان کے ساتھیوں سے غیر قانونی منشیات بر آمد کی تھی۔

دوسری جانب آریان خان کی ضمانت کی درخواست پر ممبئی ہائی کورٹ میں 26 اکتوبر بروز منگل کو سماعت ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں