The news is by your side.

Advertisement

نئے مالی سال 2020-21 کے آغاز میں بھی مہنگائی میں اضافہ

اسلام آباد : نئے مالی سال2020-21 کے آغاز میں بھی مہنگائی میں اضافہ ہوا، جولائی2020 میں مہنگائی کی شرح میں 2.50فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی ادارہ شماریات نے جولائی 2020 میں مہنگائی کے اعداد وشمارجاری کردیئے، جس میں بتایا گیا ہے کہ نئے مالی سال2020-21کے آغازمیں بھی مہنگائی میں اضافہ ہوا۔

ادارہ شماریات کا کہنا ہے کہ جولائی2020میں مہنگائی کی شرح میں2.50فیصداضافہ ریکارڈ کیا گیا ، جولائی 2019 کے مقابلے جولائی 2020میں مہنگائی کی شرح 9.30 فیصد رہی ۔

اعداد وشمار کے مطابق ایک ماہ میں ٹماٹر 179فیصد،موٹرفیول27،سبزیاں24فیصد، مصالحہ جات7.57فیصد ،چینی 3.82، چکن 2.6فیصد مہنگی ہوئیں جبکہ پیاز17فیصد،انڈے11فیصد ، گندم،آٹا7فیصد تک مہنگا ہوا۔

ادارہ شماریات نے کہا دال مونگ10.72فیصد، ٹرانسپورٹ7.55،دال مسور6فیصدسستی جبکہ پھل6.24فیصد،دال ماش2.71،چنا2.7، دال چنا 2.39 فیصد سستے ہوئے۔

یاد رہے جولائی کے آخری ہفتے ملک میں مہنگائی کی شرح 10اعشاریہ 50فیصد رہی، اور 17اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا جبکہ 11میں کمی اور 23میں استحکام رہا۔

رپورٹ کے مطابق چینی دہی اور آلو کی قیمت 2 روپے بڑھ گئی، زندہ مرغی 20روپے جبکہ فی درجن کیلے 4روپے سستے ہوئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں