The news is by your side.

Advertisement

کورونا میں مبتلا فرنٹ لائن ہیروز کے ساتھ انسانیت سوز سلوک کا انکشاف

کراچی : کورونامیں مبتلافرنٹ لائن ہیروزکےساتھ انسانیت سوزسلوک کا انکشاف سامنے آیا، کورونا کی تشخیص کے باعث کراچی کے سول اسپتال کی اسٹاف نرس اوروارڈ بوائے شوہر کو شہر بدر کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کورونامیں مبتلافرنٹ لائن ہیروزکےساتھ انسانیت سوزسلوک کا انکشاف سامنے آیا ، کورونا کی تشخیص کے بعد کراچی کے سول اسپتال کی اسٹاف نرس اور ان کے شوہر کو شہر چھوڑنے پر مجبور کردیا گیا۔

اسٹاف نرس شہناز نے اے آروائی نیوزسے انصاف کی اپیل کرتے ہوئے کہا میں سول اسپتال میں اسٹاف نرس ہوں، ہم سی ایم ایس کمپاؤنڈنشترروڈپررہائش پذیرتھے اور شوہر مجید میڈیکولیگل آفیسر کے ساتھ پیرا میڈیکل اسٹاف ہے۔

شہناز کا کہنا تھا کہ ڈیوٹی کےدوران شوہرمیں کوروناکی تشخیص ہوئی، میں نےفوری شوہرکو15روزکےلیےگھرمیں قرنطینہ کردیا، آج سے7روزقبل علاقہ کمیٹی نےرات2بجے گھر پر دھاوا بولا، ہمیں کہاگیاتمہارےگھرمیں کوروناکامریض ہے اسے باہر نکالو، ہمیں 3سے4بجےکےدرمیان گھرسےنکال دیا گیا۔

اسٹاف نرس نے کہا کہ میں اپنےبیمارشوہرکو لے کر دوسرے شہر شفٹ ہوگئی، ایک جانب ہمیں سلام پیش کیاجاتاہےاورفرنٹ لائن ہیرو کہا جاتا ہے، ہمیں بتایا جائے کیا کوروناہم خرید کر لائے تھے؟ کیاپوری دنیامیں ہم واحد پیرامیڈیکل اسٹاف تھےجنہیں کوروناہوا؟

ان کا کہنا تھا کہ اگرہمیں یہ بیماری لگ گئی تھی توہماراکیاقصورتھا، ہمارےساتھ بہت زیادتی کی گئی اورپوری فیملی کوہراساں کیا گیا، اپنی چھوٹی بچی کراچی چھوڑ کر اپنے شوہر کے ساتھ آئی ہوں، وزیراعظم عمران خان اور متعلقہ حکام سے انصاف کی اپیل ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں