The news is by your side.

وہ علامات جو فالج کی طرف اشارہ کریں

فالج جسم کو بے جان کردینے والا مرض ہے جو زائد عمر کے افراد کو لاحق ہوسکتا ہے، تاہم اب کم عمر افراد بھی اس کا نشانہ بن رہے ہیں۔

دنیا بھر میں فالج یا اسٹروک کی شرح میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے، اس کی وجوہات میں غیر متوازن غذا کا استعمال، نشہ، غیر معیاری نیند اور ماحولیاتی آلودگی شامل ہیں۔

فالج کیا ہے؟

فالج کا حملہ اس وقت ہوتا ہے جب دماغ کو خون کی فراہمی کم یا اس میں خلل پیدا ہونے کے سبب دماغ غذائی اجزا اور آکسیجن سے محروم ہوجاتا ہے جس کے نتیجے میں دماغی خلیات مردہ ہونے لگتے ہیں۔

تاہم فالج کی دو اقسام ہیں ان میں سے ایک بلڈ کلاٹ کی وجہ سے شریانوں کے بند ہونے جسے (اسکیمک اسٹروک) کہا جاتا ہے جبکہ دوسری قسم کا فالج خون کی شریان کے پھٹنے یا رسنے جسے (ہیموریجک اسٹروک) کی وجہ سے بھی ہوسکتا ہے۔

اسی طرح کچھ افراد اپنے دماغ میں خون کے بہاؤ میں عارضی رکاوٹ کی بنا پر بھی فالج کا سامنا کر سکتے ہیں، جسے عارضی اسکیمک اٹیک کہا جاتا ہے۔

فالج کے نتیجے میں کچھ واضح علامات سامنے آتی ہیں جن کا جاننا نہایت ضروری ہے تاکہ ان علامات کو جان کر فوری قدم اٹھایا جاسکے اور انسانی جان بچائی جاسکے۔

فالج کی علامات

کبھی کبھی فالج قدرے آہستہ اور ہلکی رفتار سے آگے بڑھتا ہے جس کی علامات اتنی واضح نہیں ہوتی، تاہم ایک ایسا فالج جو اچانک ہو تو اس کی کئی واضح علامات سامنے آتی ہیں جو کچھ یوں ہیں۔

اچانک جسم کا بے حس ہوجانا جیسے بازو، چہرے یا پیروں کی کمزوری، خاص طور پر جسم کے ایک طرف یعنی آدھے حصے کی جانب۔

اچانک کنفیوژن پیدا ہوجانا، بولنے یا سمجھنے میں دشواری کا سامنا کرنا۔

دیکھنے میں ایک یا دونوں آنکھوں سے دشواری پیش آنا۔

چلنے میں اچانک پریشانی کا سامنا کرنا، توازن برقرار نہ رکھ سکنا اور چکر آنا۔

سر میں کسی وجہ کے بغیر اچانک شدید درد ہونا۔

احتیاطی تدابیر

فالج کا بہترین علاج ان تمام عوامل سے دور رہنا ہے جو فالج کا سبب بنتے ہیں جو کچھ یوں ہیں۔

ہر طرح کے نشے سے دور رہنا

روزانہ ورزش کرنا

پھلیاں، گری دار میوے اور سبزیاں کو زیادہ غذا میں شامل رکھنا

مرغی اور سرخ گوشت کے بجائے سمندری غذا لینا

چکنائی، چینی اور ریفائنڈ اناج کی مقدار کو محدود کرنا

Comments

یہ بھی پڑھیں