The news is by your side.

Advertisement

پی ڈی ایم میں شامل چھوٹی جماعتوں سے بھی اہم حلقوں کے رابطوں کا انکشاف

لاہور : پی ڈی ایم میں شامل چھوٹی جماعتوں سے بھی اہم حلقوں کے رابطوں کا انکشاف سامنے آیا جبکہ گرینڈ ڈائیلاگ کے حوالے سے کئی جماعتوں نے نرم گوشے کا اظہار کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پی ڈی ایم کےاجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی، جس میں پی ڈی ایم میں شامل چھوٹی جماعتوں سے بھی اہم حلقوں کے رابطوں کا انکشاف ہوا۔

ن لیگ اور پی پی سمیت اتحادی جماعتوں کے سربراہوں سے مذکرات کیلئے رابطے شروع کردیے ہیں جبکہ گرینڈ ڈائیلاگ کے حوالے سے کئی جماعتوں نے نرم گوشے کا اظہار کردیا۔

نوازشریف نے گرینڈ مذکرات کو چال قرار دیا، جس کی مولانافضل الرحمان نے تائید کردی ہے، نوازشریف نے رائے میں کہا ہے کہ شہباز شریف بھی اس چال میں کئی بارپھنس چکےہیں، فیصلہ آپ قائدین نےخودکرناہے، شہبازشریف کوایک مرتبہ پھرمیٹھی باتوں میں لانےکی کوشش کی گئی، مذاکرات ان سے کیے جاتے ہیں جو بددیانتی کا مظاہرہ نہ کریں۔

نوازشریف کا کہنا ہے کہ 40سالہ اپنی سیاسی زندگی میں کئی نشیب وفرازدیکھےہیں، سینیٹ انتخابات کےحوالےسےفیصلہ سوچ سمجھ کر کرنا ہوگا۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں پیپلزپارٹی نے سینیٹ انتخابات میں حصہ لینے پراصرار کیا اور آصف زرداری نے سینیٹ اور ضمنی انتخابات میں ہرصورت حصہ لینے کی تجویز پیش کی۔

آصف زرداری نے کہا کہ اگرسینیٹ الیکشن میں جاتے ہیں تو بھی ہماراپلڑا بھاری ہوگا، سینیٹ انتخابات میں آرام سے 12 سے 14 نشستیں جیت سکتے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی نے استعفوں کےحوالے سے ساراوزن پی ڈی ایم پر ڈال دیا، پیپلزپارٹی نے کہا ہے کہ استعفوں کا آپشن تب استعمال ہوں جب ماحول گرم اور عوام سڑکوں پر ہو، عوامی رائےعامہ کو ہموار کرنے کیلئے ریلیاں اور جلوس نکالیں جائیں۔

پیپلزپارٹی کا کہنا تھا کہ استعفوں کیلئے ہر وقت تیار ہیں لیکن حکمت عملی میڈیا پر ظاہر نہ کی جائے۔

پیپلزپارٹی نے اجلاس میں تجویز دی کہ استعفے کب دینے ہیں یہ سرپرائز ہی رہنے دیں، اجلاس میں کہا گیا کہ پی ڈی ایم سطح پر ملک کے سینئر صحافیوں اور ایڈیٹرزسے ملاقاتیں کی جائیں گی ، جس میں پی ڈی ایم کی تحریک کے حوالے سے آگاہ کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں