The news is by your side.

Advertisement

اسرائیل میں انتخابات قریب، نیتن یاہو کا فوجی جارحیت جاری رکھنے کا عزم

غزہ: اسرائیل میں انتخابات قریب ہونے کے باوجود وزیراعظم نیتن یاہو نے فوجی جارحیت جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق دو روز قبل ہی غزہ میں ہفتہ وار احتجاجی مظاہرے کے دوران قابض اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے ایک فلسطینی شہید جبکہ درجنوں زخمی ہوگئے تھے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فورسز نے غزہ میں حماس کے خلاف بھی کارروائیاں تیز کردی ہیں، حالیہ دنوں میں حماس کے کئی ٹھکانوں پر راکٹ فائر کیے گئے۔

اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کا اپنے ایک بیان میں کہنا تھا کہ غزہ میں بڑے پیمانے پر آپریشن کرنے سے بھی دریغ نہیں کریں گے، کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ ہم الیکشن کی تیاریوں میں مصروف ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ حماس خوش فہمی میں نہ رہے، اشتعال انگیزی کرنے والوں کا سدباب کیا جائے گا، ذمہ داروں کو مستثنٰی قرار نہیں دیا جاسکتا۔

غزہ: اسرائیلی فورسز کی فائرنگ، ایک فلسطینی شہید، 6 زخمی

خیال رہے کہ گذشتہ روز غزہ کی پٹی کے شمالی علاقے میں حماس کی ایک تنصیب کو نشانہ بنایا گیا تھا اور وسطی علاقے میں واقع قصبے دیر البلاح سے مغرب میں مچھلیوں کے شکار کے لیے استعمال ہونے والی دو کشتیوں پر بمباری کی گئی، تاہم اس حوالے سے کوئی زخمی یا ہلاکتوں کی اطلاعات موصول نہیں ہوئیں۔

اسرائیل میں الیکشن 9 اپریل کو ہونے جارہے ہیں، بین الاقوامی تعلقات عامہ کے ماہرین نے خیال ظاہر کیا ہے کہ نیتن یاہو اس تناؤ کے باعث اقتدار سے ہاتھ دھو بھی سکتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں