The news is by your side.

Advertisement

انتظارقتل کیس: عدالت کا انکوائری کے لیے جج کی نامزدگی سے انکار

کراچی : انتظار قتل کیس کی تحقیقات میں کوئی پیش رفت نہ ہوسکی، سندھ ہائیکورٹ نے جوڈیشل انکوائری کے لیے جج کی نامزدگی سے انکار کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ دنوں کراچی کے علاقے ڈیفنس میں اے سی ایل سی اہلکاروں کی فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے نوجوان انتطار احمد قتل کیس میں اب تک کوئی پیش رفت نہ ہوسکی۔

سندھ حکومت کی جانب سے کیس کی جوڈیشل انکوائری کیلئے دی جانے والی درخواست پر سندھ ہائی کورٹ نے جج کی نامزدگی سے انکار کرتے ہوئے متعلقہ سیشن جج کو قانون کے مطابق کارروائی جاری رکھنے کی ہدایت کی ہے۔

سندھ ہائیکورٹ نے محکمہ داخلہ سندھ سے کہا ہے کہ دفعہ اے22، بی22کی موجودگی میں جوڈیشل انکوائری کی افادیت نہیں ہے۔

واضح رہے کہ مقتول انتظار احمد کے والد اشتیاق احمد صدیقی نے پولیس تفتیش پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے سندھ حکومت سے واقعے کی جوڈیشل انکوائری کروانے کی درخواست کی تھی۔

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کے حکم پر17 جنوری کو محکمہ داخلہ نے رجسٹرار ہائیکورٹ کو جوڈیشل انکوائری کے لیے خط لکھا تھا۔


مزید پڑھیں: انتظارقتل کیس کی عدالتی تحقیقات کیلئے حکومت کا سندھ ہائی کورٹ کو خط


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔ 

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں