انٹر بورڈ آفس میں چھاپہ کھلی مہاجر دشمنی ہے، متحدہ قومی موومنٹ -
The news is by your side.

Advertisement

انٹر بورڈ آفس میں چھاپہ کھلی مہاجر دشمنی ہے، متحدہ قومی موومنٹ

کراچی : متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے کراچی انٹربورڈ آفس میں محکمہ اینٹی کرپشن پولیس کی جانب سے چھاپے، گرفتاریوں اور مہاجرافسران وملازمین کو ہراساں کرنے کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کرپشن کی دلدل میں گردن تک دھنسی ہوئی سندھ حکومت کی جانب سے کراچی میں مہاجرافسران اور ملازمین کو ہراساں کرنا کھلی مہاجر دشمنی ہے۔

ایک بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہا کہ ایم کیوایم ، ملک بھرسے کرپشن کا خاتمہ چاہتی ہے لیکن کرپشن کے خاتمے کیلئے صرف کراچی کے اداروں اورشہریوں کو نشانہ بنانا سراسر ظلم اور انتقامی کارروائیاں ہیں۔

ملک بھرکے عوام اس حقیقت سے واقف ہیں کہ کرپشن کا ناسور سندھ سمیت ملک بھرمیں بھی پھیل چکا ہے لیکن کرپشن کی آڑمیں کارروائیاں صرف کراچی میں کی جارہی ہیں۔

رابطہ کمیٹی نے کہا کہ صوبہ سندھ میں پیپلزپارٹی کے وزراء لاکھوں روپے رشوت لیکر کراچی بورڈ آفس میں افسران تعینات کررہے ہیں، بھاری رقوم لیکر سرکاری ملازمتیں فروخت کررہے ہیں، محض کاغذوں پراندرون سندھ میں ترقیاتی منصوبے دکھا کراربوں روپوں کی کرپشن کی جارہی ہے، سینکڑوں اسکول وڈیروں کی ذاتی اوطاق بن چکے ہیں۔

تھانوں میں ایس ایچ اوز کی تعیناتی کیلئے بھاری رشوت وصول کی جاتی رہی ہے اوراندرون سندھ کے عوام جان ومال کے تحفظ، صحت وصفائی ، پینے کے صاف پانی ، بہترسڑکوں اوربنیادی تعلیم کی سہولیات سے محروم ہیں۔

رابطہ کمیٹی نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے رہنماوٴں اوروزراء کی کرپشن سے ذرائع ابلاغ بھرے ہوئے ہیں لیکن صوبہ سندھ کی متعصب حکومت خود احتسابی سے دانستہ گریز کرتے ہوئے کرپشن کی آڑ میں کراچی کے سرکاری ، نیم سرکاری ،بلدیاتی اداروں اورمہاجر افسران و ملازمین کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنارہی ہے۔

رابطہ کمیٹی نے کہا کہ اگرپیپلزپارٹی کی حکومت ،کرپشن کے خاتمے میں واقعی مخلص ہے تو وہ سب سے پہلے اپنے گریبان میں جھانکے، کرپٹ ترین عناصر سے اپنی صفوں کو پاک کرے اورکرپشن کی آڑ میں کراچی کے اداروں اور مہاجرافسران وملازمین کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنانے کا سلسلہ فی الفور بند کرے ۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں