کلبھوشن کیس: پاکستان عالمی عدالت کے دائرہ اختیارکو چیلنج کرے گا -
The news is by your side.

Advertisement

کلبھوشن کیس: پاکستان عالمی عدالت کے دائرہ اختیارکو چیلنج کرے گا

اسلام آباد : پاکستان نے عالمی عدالت میں زیر سماعت کلبھوشن یادیو کیس سے متعلق اپنی حکمت عملی تیارکرلی، مقدمے کےحوالے سے عالمی عدالت کے دائرہ اختیار کو چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کیس سے متعلق عالمی عدالت میں بھارت سے مقابلے کے لئے پاکستان نے بھی اپنی حکمت عملی تیار کرلی ہے۔ عالمی عدالت انصاف میں کلبھوشن کیس کی سماعت پیر کو ہوگی۔

اس حوالے سے عالمی عدالت نے حکومت پاکستان کو خط بھی ارسال کردیا ہے جو اسلام آباد نے وصول بھی کرلیا ہے، ذرائع کے مطابق عالمی عدالت میں پاکستان کی جانب سے اٹارنی جنرل اشتراوصاف پیش ہوں گے۔

پاکستان عالمی عدالت میں کلبھوشن سے متعلق مقدمہ بھرپورانداز میں لڑے گا، کلبھوشن کےاعترافی بیانات عالمی عدالت کے سامنے رکھے جائیں گے۔

پاکستان اس کیس میں قانونی پیچیدگیوں اورعالمی عدالت انصاف کے دائرہ اختیاراورطریقہ کار کا جائزہ لے رہا ہے اس حوالے سے اٹارنی جنرل اشتراوصاف نے متعلقہ حکام سے مشاورت کرلی ہے۔

مزید پڑھیں : کلبھوشن کا معاملہ عالمی عدالت میں لے جانے کا کوئی فائدہ نہیں، بھارتی میڈیا کا اعتراف

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان کی جانب سےتین نکاتی حکمت عملی تیارکی گئی ہے، جس میں عالمی عدالت کےدائرہ اختیارکو چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں : کلبھوشن کیس : عالمی عدالت کا خط پاکستان کو موصول ہوگیا

ذرائع کا کہنا ہے کہ عالمی عدالت کے پاس اس طرح کے کیس سننے کا اختیارنہیں ہے، ماضی میں پاک بحریہ کےطیارہ گرانے پرپاکستان عالمی عدالت گیا، پاکستان کےعالمی عدالت جانے پر بھارت نے منع کردیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں