The news is by your side.

پاکستان کے سیلاب متاثرین کی بحالی کیلئے جنیوا میں عالمی ڈونرز کانفرنس آج ہوگی

جینوا : پاکستان میں ہولناک سیلاب کے متاثرین کی امداد کے لیے جنیوا میں عالمی ڈونرزکانفرنس آج ہوگی، جس میں وزیراعظم شہباز شریف سیلاب متاثرین کامقدمہ دنیا کے سامنے پیش کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کے سیلاب متاثرین کیلئے جنیوا میں عالمی ڈونرز کانفرنس آج ہوگی ، جس میں وزیراعظم شہبازشریف اور اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس میزبانی کریں گے۔

پاکستان ریزیلینٹ ریکوری، بحالی اور تعمیر نو کا فریم ورک فور آر ایف پیش کرے گا اور سیلاب کی صورتحال اور نقصانات شرکاء کے سامنے رکھے گا۔

پاکستان سیلاب زدہ علاقوں میں تعمیرِ نو اور بحالی کے لیے 16.3 ارب ڈالر امداد کی اپیل کرے گا۔

وزیراعظم اور اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کی سربراہی میں کانفرنس کا ایک اعلیٰ سطح افتتاحی سیشن ہوگا، کانفرنس میں بین الاقوامی تعاون اور طویل المدتی شراکت داری کی اہمیت پر زور دیا جائے گا۔

جنیوا میں ہونیوالی ڈونرز کانفرنس میں پارٹنر سپورٹ کے اعلانات بھی کئے جائیں گے۔

کانفرنس میں سربراہان مملکت و حکومت، وزرا،متعدد ممالک کے اعلیٰ نمائندے سمیت عالمی مالیاتی ادارے،فاؤنڈیشنز ،بین الاقوامی ترقیاتی تنظیمیں ، نجی شعبے، سول سوسائٹی اور آئی این جی اوز شرکت کریں گی

وزیراعظم شہباز شریف وفد کے ہمراہ جنیوا پہنچ گئے،وفد میں وزیرخارجہ بلاول بھٹو زرداری،وزیرخزانہ اسحاق ڈار، وزیر موسمیاتی تبدیلی شیری رحمان، وزیرِ منصوبہ بندی احسن اقبال اور وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب شامل ہیں۔

روانگی سے قبل وزیراعظم نے اپنے ٹوئٹ میں کانفرنس کے حوالے سے کہا تھا کہ سیلاب متاثرین کا مقدمہ دنیا کے سامنے پیش کریں گے، مقصد متاثرین سمیت معیشت کی بحالی کیلئےامداد حاصل کرنا ہے، لاکھوں پاکستانی ہمدردی اور امداد کے منتظر ہیں۔

یاد رہے موسمیاتی تبدیلیوں سے پگھلنے والے گلیشیئرز کے نتیجے میں پاکستان میں گزشتہ سال ستمبر میں مون سون کی ریکارڈ بارشوں ،اور سیلاب سےہونے والی تباہی میں اسی لاکھ افراد بے گھر اور سترہ سو افراد جاں بحق ہوئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں