The news is by your side.

Advertisement

قہوہ پلا کر ایک کروڑ روپے لوٹنے کی واردات، خواتین کی تصاویر سامنے آ گئیں

کراچی: چند دن قبل شہر قائد کے علاقے خیابان بدر میں قہوہ پلا کر ایک کروڑ روپےکی لوٹنے کی واردات میں ملوث 2 خواتین کی سی سی ٹی وی فوٹیج سے لی گئی تصاویر سامنے آ گئیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق چند روز قبل ڈیفنس کے علاقے خیابان بدر میں دو ماسیوں نے ایک فیملی کو نشہ آور قہوہ پلا کر گھر میں ایک کروڑ سے زائد کی واردات کی تھی، تفتیشی پولیس نے سی سی ٹی وی کی مدد سے ان ماسیوں کی تلاش تیز کر دی ہے۔

سی سی ٹی وی فوٹیج سے لی گئی تصاویر میں دونوں خواتین کو فرار ہوتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے، تفتیشی حکام کا کہنا تھا کہ ماسیوں نے شناخت چھپانے کے لیے چادروں کا استعمال کیا تھا، اور دونوں خواتین نے انتہائی مہارت سے واردات کی تھی۔

ڈیفنس خیابان بدر میں رہائش پذیر فیملی کے ذرائع کا کہنا تھا کہ ملزمہ ثمینہ نے گھر میں موجود خواتین کو قہوے میں بے ہوشی کی دوا ملا کر پلائی تھی، اس کے بعد ملزمہ اپنی ساتھی سمیت کروڑ سے زائد مالیت کا مال لوٹ کر فرار ہوئی۔

ڈکیتی کی واردات میں ایک کلو سونا، 25 ہزار اماراتی درہم لوٹے گئے تھے، 4 لاکھ پاکستانی روپے اور دیگر قیمتی سامان بھی لوٹا گیا تھا۔

پولیس کا کہنا تھا کہ واردات کے بعد متاثرہ فیملی کو طبی امداد کے لیے اسپتال پہنچایا گیا، رپورٹ کے مطابق نشہ آور قہوہ پینے والے افراد کی طبیعت ٹھیک ہے۔

واردات کے بعد پولیس نے فیملی سے رابطہ کر کے گھر کا جائزہ بھی لیا، پولیس حکام کا کہنا تھا کہ ساؤتھ زون پولیس نے متعدد مرتبہ مہم چلائی ہے کہ ماسیوں کا ڈیٹا ضرور لیں، لیکن کوئی بھی شخص ماسی یا ملازم رکھنے سے قبل اس ہدایت پر عمل نہیں کرتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں