The news is by your side.

Advertisement

پیپلز پارٹی کی اے آر وائی نیوز کے خلاف مہم ، اقرارالحسن کا سعید غنی کو چیلنج

کراچی : اے آر وائی نیوز کے کیخلاف مہم پر اینکر پرسن اقرارالحسن نے سعید غنی کو چیلنج کیا ہے کہ میرے ساتھ اپنے حلقہ انتخاب میں چلیں، اگرحلقے میں بڑے مسائل نہ ہوئے تو میں صحافت چھوڑ دوں گا۔

تفصیلات کے مطابق اے آروائی نیوز نے سعید غنی سے صحت کے شعبے کا حساب پوچھا تو پیپلزپارٹی کے وزیر نے جواب کے بجائے سوشل میڈیا پرچینل کیخلاف مہم شروع کردی جبکہ کراچی اور اندرون سندھ کے شہروں میں اے آروائی نیوز کیخلاف وال چاکنگ بھی کرا دی۔

اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’’سرعام‘‘ کے میزبان اقرارالحسن نے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا اپنی نااہلی اورکرپشن کو چھپانا سندھ حکومت کا پرانا وتیرا ہے، یہ لوگ اپنے عوام کا استحصال کرتے رہے ہیں، سندھ کے عوام آج بھی بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں، سندھ کے بڑےشہروں میں آج بھی سڑکیں موجود نہیں۔

اقرارالحسن کا کہنا تھا کہ کرپشن کی نشاندہی کوسندھ پرحملہ قراردیدیاجاتاہے، ان لوگوں کوغیرت دلانےکی ضرورت ہے، سند ھ کےاسپتالوں میں دوائیں نہیں لوگ مر رہےہیں، کوئی شہر نہیں جہاں کے اسپتالوں میں تمام سہولتیں میسر ہوں۔

انھوں نے کہا کہ میں سعید غنی کو چیلنج کرتا ہوں میرے ساتھ اپنے حلقہ انتخاب میں چلیں، ان کےحلقے کے اسکولوں میں جانوربندھیں گے، گھٹنوں گھٹنوں گنداپانی کھڑا ہے، جواب طلبی کی جائے تو یہ سندھ کارڈ کھیلنا شروع کردیتے ہیں۔

اقرارالحسن کا کہنا تھا کہ سعید غنی اپنے حلقے میں میرے ساتھ چلیں وہاں اسکول دکھاتا ہوں، وہاں کی ڈسپینسری دکھاتاہوں کس حال میں ہیں، اگر حلقے میں بڑے مسائل نہ ہوئے تو میں صحافت چھوڑ دوں گا اور اگرمیری بات سچ ہوئی تو سعید غنی بھی اخلاقی جرات کا مظاہرہ کریں گے۔

اے آر وائی نیوز کے اینکر پرسن نے کہا کہ میں اللہ اوررسول کاگواہ بناکہتاہوں ، سعیدغنی کادعویٰ ثابت ہواتو میں ٹی وی پرآنا چھوڑدوں گا، میں نےہی چند دن قبل ہی ٹوئٹ میں سندھ حکومت کی تعریف کی تھی اور مرادعلی شاہ کے ترقیاتی کاموں کو میں نے سراہا تھا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ سندھ کےلوگ بہت اچھے اور پیار کرنے والے ہیں، اے آروائی نیوز کے خلاف مہم کے لیے کچھ لوگوں کو کرائے پر لیا گیا ہے۔

دوسری جانب فنگشنل لیگ کی رہنما نصرت سحرعباسی نے کہا کہ بلاول بھٹو کے بڑےبیانات آتے ہیں صحافیوں کےلیے، آج وہ بیانات کہاں گئے، اےآروائی نیوز نے کسی کےخلاف مہم شروع نہیں کی، اےآروائی نیوز سچ اور پورے ملک کی خبریں دکھاتاہے، عوام توسوال پوچھیں گےاوراےآروائی نیوزدکھائے گا۔

نصرت سحرعباسی کا کہنا تھا کہ گندم کی رکھوالی پر مامور وزیراس کی چوری میں ملوث ہے، پیپلزپارٹی اس طرح مہم چلائیں گی تو مطلب ہے ان کےقول وفعل میں فرق ہے۔

وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے اپنے بیان میں کہا کہ ہم سب اپنے لیے زبردست وکیل اور دوسروں کےلیےبرے جج ہیں، کل تک کچھ پی ٹی آئی کو میڈیا کی تنقید برداشت کرنے کی تلقین کرتے نہ تھکتے تھے، وہی آج اے آروائی نیوزکے خلاف مہم جوئی کرتے نظر آتےہیں، میڈیا کیخلاف یہ مہم ناپسندیدہ ہے ، پیپلز پارٹی کو اپنی پالیسی پرفوری نظرثانی کرنی چاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں