The news is by your side.

Advertisement

ایرانی حکام نے 20 سے زائد پاکستانیوں کو ملک بدر کردیا

تہران: ایرانی حکومت نے 20 سے زائد پاکستانی تارکین وطن کو ملک بدر  کرکے ایف آئی اے حکام کے حوالے کردیا۔

ریڈیو پاکستان کے مطابق ایرانی حکام نے 20 سے زائد پاکستانیوں کو  بلوچستان کے علاقے چاغی میں واقع تافتان بارڈر کے ذریعے فیڈرل انویسٹی گیشن یونٹ کے حوالے کیا۔

ایرانی حکام کے مطابق ملک بدر کیے جانے والے پاکستانی تارکینِ غیر قانونی طور پر ایران میں رہائش پذیر تھے جنہیں قانونی کارروائی کے تحت گرفتار کر کے واپس پاکستان بھیجا گیا۔

ایرانی حکام کا کہنا ہے کہ پاک ایران سرحد سے ہر سال سیکڑوں افراد اُن کی سرزمین میں غیر قانونی طریقے سے داخل ہونے کی کوشش میں پکڑے جاتے ہیں ایسے تمام افراد کو دوبارہ پاکستانی حکام کے حوالے کردیا جاتا ہے۔

ایف آئی اے حکام کے مطابق ایران ہر سال 20 سے 26 ہزار پاکستانیوں کو ہمارے حوالے کرتا ہے، یہ افراد ایران کےذریعے یورپ، ترکی اور دیگر ممالک کا سفر کرنے کے لیے غیر قانونی راستہ اختیار کرتے ہیں۔

واضح رہے کہ پاکستان اور ایران کے درمیان سرحد 900 کلومیٹر پر پھیلی ہوئی ہے، دونوں ممالک کے مابین 2014 مین یہ معاہدہ ہوچکا ہے کہ غیر قانونی طور پر ممالک میں داخل ہونے والے افراد کو  گرفتار کر کے اداروں کے حوالے کیا جائے گا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں