The news is by your side.

Advertisement

امریکا کی جوہری معاہدے سے علیحدگی موجودہ بحران کی وجہ ہے: ایران

تہران: ایران صدر حسن روحانی نے کہا ہے کہ جوہری مذاکرات کے لیے ازخود تیار ہیں، امریکا کی جوہری معاہدے سے علیحدگی موجودہ بحران کی وجہ ہے۔

ایران کے صدر حسن روحانی نے اپنے وزیرخارجہ جواد ظریف کے دورہ فرانس کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ازخود کسی بھی بات چیت کرنے کے لیے تیار ہیں تاکہ اس بحرانی کیفیت سے نکلا جاسکے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اپنے ایک انٹرویو میں حسن روحانی کا کہنا تھا کہ موجودہ بحرانی کیفیت امریکا کی جوہری معاہدے سے یکطرفہ علیحدگی کے باعث پیدا ہوئی۔

ان کا کہنا تھا کہ اگر انہیں یہ معلوم ہو کہ کوئی شخص ان کے ملک ایران کو درپیش مشکلات سے نکالنے میں معاون ثابت ہوسکتا ہے اور وہ ہماری ترقی کا خواہاں ہے تو وہ اس سے ملنے کا موقع قطعی ضائع نہیں کریں گے۔

دوسری جانب امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ وہ ایرانی وزیرخارجہ جواد ظریف کی جی -7 سربراہی اجلاس میں آمد کو خوش آمدید کہتے ہیں اور ان کی عزت بھی کرتے ہیں۔

جی سیون اجلاس میں ایرانی وزیر خارجہ کی شرکت کس کی مرضی سے ہوئی ؟

امریکی صدر نے جی-7 سربراہی اجلاس میں بات چیت کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ فرانس کے صدر نے ایرانی وزیرخارجہ کی آمد سے قبل ان سے اس اقدام کی منظوری لی تھی۔

ایران اور امریکا کے درمیان تعلقات اس وقت سے کشیدگی کا شکار ہیں جب گذشتہ برس امریکا نے یک طرفہ طور پر سنہ 2015 میں ایران سے ہونے والے جوہری معاہدے سے دستبرداری کا اعلان کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں