The news is by your side.

Advertisement

ایران نے تیل کے معاملے پر سعودی عرب کو بالواسطہ دھمکی دے دی

تہران: ایران نے تیل کے معاملے پر سعودی عرب کو بالواسطہ دھمکی دے دی، تیل کی عالمی منڈی میں ایران کی جگہ لینے کو دغا بازی قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق ایران پر امریکی پابندیوں کے بعد ایران کو تیل کی عالمی مارکیٹ میں اپنے حصے کے ہاتھ سے نکلنے کی فکر ستانے لگی۔

ایران کے نائب صدر اسحاق جہانگیری کا کہنا تھا کہ ایران کو اپنا تیل فروخت کرنے میں کسی مشکل کا سامنا نہیں ہوگا، عالمی تیل کی منڈی میں ان کی جگہ نہیں لی جاسکتی۔

انھوں نے سعودی عرب کا نام لیے بغیر کہا کہ تیل کی جنگ میں اگر کوئی ملک عالمی مارکیٹ میں ایران کی جگہ لینے کی خواہش رکھتا ہے تو وہ جان لے کہ یہ ایرانی عوام سے دغا بازی ہوگی۔

اسحاق جہانگیری کا کہنا تھا کہ تیل کی بین الاقوامی مارکیٹ میں ایران کی جگہ لینے والا دغا بازی کا مرتکب ہوگا اور اسے اس دغا بازی کی قیمت چکانے پڑے گی۔

سعودی عرب سے تیل کی پیداوار بڑھانے کی درخواست کی ہے: امریکی صدر


خیال رہے کہ گزشتہ روز امریکی صدر ٹرمپ نے ٹوئٹ کے ذریعے کہا تھا کہ انھوں نے سعودی شاہ سلمان سے کہا ہے کہ وہ تیل کی پیداوار میں بیس لاکھ بیرل کا اضافہ کریں تاکہ عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں ہونے والے اضافے کو قابو کیا جاسکے۔

ایرانی نائب صدر نے یہ بھی کہا کہ تیل کے ساتھ ساتھ امریکا دیگر ایرانی برآمدات اور کرنسی کی ترسیل کو بھی متاثر کرنا چاہتا ہے، بعض علاقائی ممالک بھی اس معاملے کو ہوا دے رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ایران پر پھر سے امریکی پابندیاں لگائے جانے کا معاملہ عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں پر بری طرح اثر انداز ہوا ہے، جس کے حل کے لیے صدر ٹرمپ نے سعودی عرب کا رخ کر لیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں