The news is by your side.

Advertisement

امریکہ نے ’’ایرانی پاسداران انقلاب‘‘ کو دہشت گرد تنظیم قرار دے دیا

واشنگٹن : امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایرانی پاسداران انقلاب کو دہشت گرد تنظیم قرار دیتے ہوئےاس کے اثاثے بھی منجمد کرنے کا اعلان کردیا۔ ایران نے بھی امریکی فوج کو دہشت گرد تنظیم قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکا نے ایرانی پاسداران انقلاب کو دہشت گرد تنظیم قرار دے دیا ہے، پاسداران انقلاب کو دہشت گرد قرار دیئے جانے کے ساتھ اس پر پابندیاں بھی عائد کی گئی ہیں جن کے تحت ایرانی مسلح فوج کے اثاثے منجمد کیے جائیں گے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی شہریوں پر پاسداران انقلاب کے ساتھ کاروبار کرنے پر بھی پابندی ہوگی، دوسری جانب امریکی پابندی کے جواب میں ایران نے بھی امریکی فوج کو دہشت گرد تنظیم قرار دے دیا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے پاسداران انقلاب ریاستی آلہ کار کے طور پر دہشت گردی کے فروغ میں فعال کردار ادا کررہی ہے، پہلی بار امریکا نے کسی دوسرے ملک کے ریاستی ادارے کو دہشت گرد قرار دیا ہے۔

ڈونلڈ ٹرمپ کے بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ایران نے اپنے دہشت گردانہ عزائم کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لیے پاسداران انقلاب کو شام، لبنان، یمن اور لیبیا میں استعمال کیا جس کے ٹھوس شواہد موجود ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ اسلامی پاسداران انقلاب کی بنیاد 1979 میں رکھی گئی تھی جس کا مقصد دشمنان اسلام سے لڑنا اور انقلابی رہنماؤں کی سیکیورٹی تھا اور اب بھی روایتی فوجی یونٹ کے بجائے سیکیورٹی کی ذمہ داری پاسدران انقلاب کی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا تھا کہ پاسداران انقلاب کو ایران کی مسلح افواج میں اہم مقام حاصل ہے جس میں خاص معاشی فوائد بھی دیئے گئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں