The news is by your side.

Advertisement

بچوں میں آئرن کی کمی، علامات اور علاج

غذا میں آئرن کی کمی جسم میں خون کی کمی کی ایک عام وجہ ہے، بچے ملیریا اور پیٹ میں کیڑوں کی وجہ سے بھی خون کی کمی کا شکار ہوسکتے ہیں۔

آئرن کی کمی شیرخوار اور چھوٹے بچوں میں جسمانی اور ذہنی نشوونماء کو نقصان پہنچا سکتی ہے یہاں تک کہ معمولی سی کمی بھی ذہنی نشوونما کو متاثر کرسکتی ہے۔

کسی بھی بچے کے جسم میں اگر آئرن کی کمی ہو جائے تو اسے انیمیا کہتے ہیں، اب سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ بچوں میں آئرن کی کمی کو کیسے پورا کیا جائے؟ بچوں کی نشونمأ اور افزائش کے لیے آئرن سے بھرپور غذا لازمی ہے۔

بچوں کو بڑا ہونے کے لیے لگاتار آئرن کی ضرورت ہوتی ہے ورنہ جسم میں آئرن کی کمی واقع ہو جاتی ہے۔ ایسے بچے جو آئرن والی خوراک نہیں کھاتے یا پھر بعض بچوں کا جسم آئرن لینے سے انکار کر دیتا ہے، انہیں انیمیا ہو جاتا ہے۔

اس کا مطلب ہے کہ جسم کے خلیوں کو صحیح مقدار میں آکسیجن نہیں پہنچ رہی، جس کی وجہ سے بچے کا رنگ پیلا ہوجاتا ہے اور وہ اپنے آپ کو کمزور، تھکا ہوا اور چڑچڑا محسوس کرتا ہے۔

خون کی کمی کی علامات میں ہتھیلیوں، زبان، پلکوں کے اندر کی جانب اور ہونٹوں پر زردی کے ساتھ ساتھ تھکن اور سانس کا پھولنا شامل ہے۔

آئرن کی کمی کیسے پورا کیا جائے؟

آئرن کی کمی دور کرنے کے لیے بچے کو سپلیمنٹ (فیرس سلفیٹ) دینا ضروری ہے، جس کے لیے بچوں کے ماہر ڈاکٹر سے مشورہ کرنا ضروری ہے۔

آئرن سپلیمنٹ وٹامن سی کے ساتھ دیں تو وہ جلدی ہضم ہوجاتا ہے یا پھر اسے خالی پیٹ دیاجائے۔ اگر کھانے کے ساتھ دیا جائے تو اس کا اثر کم ہو جاتا ہے، آئرن سپلیمنٹ دودھ یا دودھ سے بنی کسی شے کے ساتھ نہ دیا جائے۔

آئرن حاصل کرنے والے فارمولے یا سیریل، گندم کی کریم، دلیہ، آئرن سے بھرے ناشتے کے سیریل، پھلیاں، کابلی چنے، مسور کی دال،پکے پکائے بین (کین کے اندر)، اوون میں پکے آلو (چھلکے سمیت)، خشک پھل، خشک خوبانی، خشک انجیر، میوے، پرون جوس، اعلیٰ قسم کا پاستا، اعلیٰ قسم کے چاول، سخت ٹوفو، گڑ کا شیرہ، بلیک اسٹریپ، بروکلی، پالک۔

جانوروں اور پودوں سے حاصل کی گئی خوراک میں آئرن پایا جاتا ہے، جانوروں سے حاصل کیا گیا آئرن ہیمی آئرن کہلاتا ہے جبکہ پودوں سے حاصل کیا گیا آئرن نان ہیمی آئرن کہلاتا ہے۔ انسانی جسم نان ہیمی آئرن کی نسبت ہیمی آئرن کو زیادہ اچھی طرح سے جذب کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

یاد رکھیں کہ آئرن ایک معدنی شے ہے اور ہر شخص کے جسم کو اپنا کام کرنے اور ہیموگلوبن بنانے کے لیے اس کی ضرورت ہوتی ہے۔ ہیموگلوبن خون میں سرخ جرثومے ہوتے ہیں جو آکسیجن کو جسم کے دوسرے حصوں میں پہنچانے کا سبب بنتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں