The news is by your side.

Advertisement

ہیتھرو ایئرپورٹ کو ہونیوالا ناقابل تلافی بڑا نقصان؟

برطانیہ میں لگائی گئی کورونا پابندیوں کے باعث ہیتھرو ایئرپورٹ کو گزشتہ سال 2 ارب 40 کروڑ ڈالر کا نقصان ہوا۔

غیرملکی نیوز ایجنسی کے مطابق ہیتھروایئرپورٹ انتظامیہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ برطانیہ میں لگائی جانے والی کورونا پابندیوں کے باعث اسے دیگر یورپی ممالک کے مقابلے میں زیادہ نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

ایئرپورٹ انتظامیہ نے دعویٰ کیا ہے کہ پابندیوں کے باعث اسے صرف گزشتہ سال 2 ارب 40 کروڑ ڈالر کا نقصان ہوا ہے۔

کورونا وبا کے پہلے سال 2020 میں بھی ہیتھرو ایئرپورٹ کو 2 ارب ڈالر کا نقصان برداشت کرنا پڑا تھا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ یورپی یونین کے مقابلے میں برطانیہ میں زیادہ پابندیاں لگائی گئیں جس کی وجہ سے ہیتھرو ایئرپورٹ واحد ایئرپورٹ تھا جسے کم ٹریفک کا سامنا کرنا پڑا۔

برطانیہ کے ایوی ایشن سیکٹر نے طویل عرصے تک سفری پابندیاں برقرار رکھنے پر برطانوی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا، تاہم برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے جمعرات سے تمام پابندیاں ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ہیتھرو ایئرپورٹ انتظامیہ کا مزید کہنا ہے کہ کورونا کی نئی قسم اومی کرون کے باعث نئے سال کا آغاز سست رہا، 2019 میں وبا آنے سے قبل مسافروں کی سالانہ تعداد 8 کروڑ سے زیادہ تھی جو وبا آنے کے بعد 2020 میں کم ہوکر 2 کروڑ 20 لاکھ ہوگئی تھی۔

واضح رہے کہ ہیتھرو ایئرپورٹ کا شمار دنیا کے مصروف ترین ایئرپورٹس میں ہوتا ہے، 2018 میں دنیا کے مصروف ترین ایئرپورٹس کی جاری فہرست میں بھی ہیتھرو چوتھا مصروف ترین ایئرپورٹ شمار کیا گیا تھا

Comments

یہ بھی پڑھیں