The news is by your side.

Advertisement

وفاقی وزیرخزانہ اسحاق ڈاراحتساب عدالت میں پیش، 27 ستمبر کو فرد جرم عائد کی جائے گی

اسلام آباد : احتساب عدالت نے اسحاق ڈار کیخلاف ریفرنس کی سماعت ایک ہفتے ملتوی کرنے کی ملزم کی درخواست مسترد کردی اور پچاس لاکھ روپے مچلکے جمع کرانے کا بھی حکم دیا، کہا جا رہا ہے کہ وزیرخزانہ اسحاق ڈار پر فرد جرم بدھ کو عائد کی جائیگی۔

تفصیلات کے مطابق اسحاق ڈار کیخلاف ریفرنس کی احتساب عدالت میں سماعت شروع ہوئی ، وزیرخزانہ اسحاق ڈار وکلا ٹیم کے ساتھ احتساب عدالت پہنچے، سماعت کے دوران سماعت کے دوران نیب نے بتایا کہ لاہور،اسلام آباد میں اسحاق ڈار کی رہائش گاہ پر چھاپے مارے آج ملزم اسحاق ڈار اچانک عدالت میں پیش ہوگئے۔

اسحاق ڈار کے وکیل نے عدالت سے7دن کےوقت کےلئےاستدعاکی ، جس پر فاضل جج نے کہا خاص مدت میں کیس کافیصلہ کرناہے، وکیل کا کہنا تھا کہ توقع ہے معاملات انصاف کے تقاضے پورے کرکے حل کیے جائیں گے۔

عدالت نے وزیر خزانہ کے وکیل کی سماعت ایک ہفتے کیلئے ملتوی کرنے کی درخواست مسترد کردی اور اسحاق ڈار کو27ستمبر کو دوبارہ طلب کرلیا۔

احتساب عدالت نے ملزم کو حاضری یقینی بنانے کیلئے پچاس لاکھ روپے مچلکے بھی جمع کرانے کا حکم دیا۔

عدالت میں ریفرنس کی کاپیاں اسحاق ڈار کےوکلا کو فراہم کردی گئیں، وزیرخزانہ اسحاق ڈارکیخلاف ریفرنس 23والیم پر مشتمل ہے، بعد ازاں عدالت نے سماعت 27 ستمبر تک ملتوی کردی۔

اسحاق ڈار کے وکیل نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ پلی بارگینگ کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ ساٹ سماعت کےموقع پر قیدی کو لے جانے والی وین اور بکتر بند گاڑی بھی احتساب عدالت پہنچادی گئی تھی۔

وزیرخزانہ اسحاق ڈار وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے ہمراہ رات گئے وطن واپس پہنچے تھے۔


مزید پڑھیں  : اسحق ڈارکے تمام اثاثے منجمد


یاد رہے کہ گذشتہ سماعت میں وفاقی وزیرخزانہ کو احتساب عدالت میں پیش ہوکر مؤقف دینے کے لیے نوٹس جاری کیے گئے تاہم وہ بیرونِ ملک ہونے کی وجہ سے پیش نہ ہوسکے، جس پر عدالت نے اسحاق ڈار کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری کے احکامات جاری کیے تھے۔

 دوسری جانب احتساب عدالت نے وزیر خزانہ اسحق ڈار کے تمام بینک اکاؤنٹس منجمد کرتے ہوئے  ان کی تمام جائیداد کی خرید و فروخت اور منتقلی پر پابندی عائد کردی تھی جبکہ نیب کی ٹیم نے ان کے گھر پر چھاپہ بھی مارا۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ڈپٹی پراسیکیوٹرجنرل نیب کی سربراہی میں نیب پراسیکیوشن ونگ نے سابق وزیراعظم نوازشریف اور ان کے بچوں ، داماد اور اسحاق ڈار کے خلاف احتساب عدالت میں ریفرنسزدائرکیے تھے۔قومی احتساب بیورو کی ٹیم نے شریف خاندان کے خلاف 3 اور وزیرخزانہ اسحاق ڈار کے خلاف 1 ریفرنس دائر کیا تھا۔

وزیرخزانہ اسحاق ڈار کے خلاف سیکشن 14 سی لگائی گئی ہے ‘جو آمدن سے زائد اثاثے رکھنے سے متعلق ہے۔ نیب کی دفعہ 14 سی کی سزا 14 سال مقرر ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں