اسرائیل نے احد تمیمی کے بیرون ملک سفر پر پابندی عائد کردی ahed tamimi
The news is by your side.

Advertisement

اسرائیل نے احد تمیمی کے بیرون ملک سفر پر پابندی عائد کردی

غزہ: اسرائیلی حکومت نے صیہونی فوجی کو تھپڑ مارنے کے جرم میں 8 ماہ جیل کاٹنے والی فلسطینی لڑکی احد تمیمی کے بیرون ملک سفر پر پابندی عائد کردی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق قابض اسرائیلی فوجیوں کو تھپڑ رسید کرنے والی بہادر فلسطینی لڑکی احمد تمیمی اور ان کے اہل خانہ کے بیرون ملک سفر پر پابندی عائد کردی گئی ہے، پابندی اسرائیلی حکومت نے احمد تمیمی کی رہائی کے دو ماہ بعد لگائی ہے۔

احمد تمیمی کے والد باسم تمیمی کے مطابق انہیں انسانی حقوق کی تنظیموں کی جانب سے یورپی ممالک میں ملاقات کی دعوت دی گئی تھی تاہم حکام نے انہیں ملک سے باہر جانے کی اجازت نہ دی۔

احد تمیمی کے والد کا کہنا تھا کہ بیرون ملک سفر پر پابندی لگا کر انہیں اور ان کے خاندان کو ہراساں کیا جارہا ہے جبکہ وہ سفر کے لیے دوبارہ درخواست جمع کروائیں گے۔

واضح رہے کہ سترہ سالہ احد تمیمی کو اسرائیلی فوجیوں کو تھپڑ مارنے پر 8 ماہ قید کی سزا سنائی گئی تھی، سزا مکمل کرنے کے بعد انہیں والدہ سمیت رواں برس 29 جولائی کو رہائی ملی تھی۔

یاد رہے کہ فلسطینی لڑکی عہد تمیمی نے جیل سے رہائی کے بعد فلسطینی صدر محمود عباس سے صدراتی محل میں ملاقات کی، فلسطینی صدر نے عہد تمیمی کو جیل سے رہائی پانے پر مبارک باد پیش کرتے ہوئے اسرائیلی مظالم کے خلاف ڈٹ کرمقابلہ کرنے پر تعریف کی تھی۔

آٹھ ماہ جیل کی سختیاں برداشت کرنے والی عہد تمیمی سے ملاقات کے دوران فلسطینی صدر محمود عباس نے عہد تمیمی کو نوجوانوں کے لیے مثال قرار دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں