The news is by your side.

Advertisement

غزہ میں کوئی بھی شہری معصوم نہیں ہے: اسرائیلی وزیر دفاع کی ڈھٹائی

یروشلم: اسرائیلی وزیر وفاع اویگدور لیبر مان نے ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا ہے کہ حماس کے زیر انتظام غزہ کے علاقوں میں کوئی بھی شہری معصوم نہیں ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسرائیلی ریڈیو سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، گذشتہ دنوں فلسطین میں احتجاجی مظاہروں کے دوران اسرائیلی فوج کےہاتھوں معصوم شہریوں کی ہلاکت سے متعلق وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ غزہ کے تمام شہری حماس کے ساتھ مل کر ہمارے خلاف کارروائی کرتے ہیں۔

وزیر دفاع اویگدور کا کہنا تھا کہ غزہ کا ہر شخص حماس سے جڑا ہے اور حماس سے تنخواہ لے رہا ہے، انسانی حقوق کے وہ تمام کارکن جو اسرائیلی سرحد عبور کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ان کا تعلق حماس کے عسکریت پسندوں سے ہے۔

غزہ میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ‘ 9 فلسطینی شہید

انہوں نے کہا کہ حماس ہمارے خلاف میڈیا اور صحافیوں کو استعمال کرتا ہے، اور ہم یہ بھی جانتے ہیں کہ کس طرح ایمبولینس کے ذریعے فلسطینیوں کو دہشت گردی کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

یاد رہے کہ گذشتہ دنوں غزہ کی سرحد سے ملحقہ علاقے میں فلسطینیوں کی احتجاجی تحریک پر اسرائیلی فوج نے فائرنگ کر دی تھی جس کے نیتجے میں صحافی سمیت درجنوں افراد جاں بحق اور سینکڑوں زخمی ہوگئے تھے، بعد ازاں اسرائیلی حکام نے کہا تھا کہ ہلاک ہونے والے فلسطینی ہماری فوج کے خلاف مزاحمت کر رہے تھے۔

شہری کی موت پرقانون کے مطابق عمل کیا جائےگا‘ امریکی سفیردفترِخارجہ طلب

خیال رہے کہ گزشتہ ہفتے 31 مارچ کو فلسطینی عوام کی جانب سے اسرائیلی بارڈر پر کیے جانے والے احتجاج پراسرائیلی فورسز کی شدید فائرنگ سے 17 شہری شہید جبکہ 1500 سے زائد زخمی ہوگئےتھے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں