اسرائیلی فوج کی فلسطینی مظاہرین پر فائرنگ، 2 شہید درجنوں زخمی israel
The news is by your side.

Advertisement

اسرائیلی فوج کی فلسطینی مظاہرین پر فائرنگ، 2 شہید درجنوں زخمی

یروشلم : اسرائیل نے فلسطین میں مظاہرین پر اندھا دھند فائرنگ کرتے ہوئے 2 فلسطینیوں کو شہید کردیا جب کہ خواتین اور بچوں سمیت درجنوں افراد زخمی ہو گئے ہیں جس کے باعث جانی نقصان میں اضافے کا خدشہ ہے.

تفصیلات کے مطابق یہ افسوسناک واقعہ فلسطین کے علاقے یونس خان میں پیش آیا جہاں فلسطینی امریکی صدر ٹرمپ کی طرف سے یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے کے اعلان کے خلاف مظاہر کر رہے تھے کہ قابض اسرائیلی فوج نے مظاہرین پر براہ راست گولیاں برسا دیں.

جاں بحق و زخمی ہونے والے افراد کو قریبی اسپتال منتقل کیا گیا جہاں دو افراد کی شہادت کی تصدیق کردی گئی ہے جب کہ زخمی افراد کو طبی امداد دی جا رہی ہے جنہیں گولیاں لگنے اور آنسو گیس شیل کے باعث زخم آئے ہیں اور جن میں چار کی حالت نازک بتائی جاتی ہے جس کی وجہ ہلاکتوں میں اضافہ کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے.

بعد طاقت کے نشے میں بدمست غاصب اسرائیلی فوج نے نہتے فلسطینیوں پر ظلم کے پہاڑ توڑنے شروع کر دیئے ہیں اور مقبوضہ فلسطین کے مسلمانوں کا خون پانی کی طرح بہانے لگا ہے۔میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ٹرمپ کے اعلان کے اگلے ہی روز اسرائیلی فضائیہ نے غزہ کی پٹی پر بموں کی برسات کر دی جس سے اب تک 2فلسطینی شہید اور معصوم بچوں اور خواتین سمیت سینکڑوں شدید زخمی ہو چکے ہیں.

 


 اسی سے متعلق : امریکا نے یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرلیا


خیال رہے کہ امریکی صدر کی جانب سے امریکی سفارت خانے کو یروشلم منتقل کیے جانے کے فیصلے کو حمایت سمجھتے ہوئے اسرائیل فوج نے نہتے فلسطینیوں پر تشدد کا بازار مزید گرم کردیا ہے اور ریڈ کراس کی رپورٹ کے مطابق ٹرمپ کے اعلان کے بعد سے اسرائیلی فوج نے مجموعی طور پر 767 فلسطینیوں کو شدید زخمی اور 7 کو شہید کرچکی ہے.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں