The news is by your side.

Advertisement

‘اسرائیل ابوعاقلہ کا قاتل، مشترکہ تحقیقات قبول نہیں’

فلسطین نے اسرائیل کو الجزیرہ کی شہید خاتون صحافی ابوعاقلہ کا قاتل قرار دیتے ہوئے مشترکہ تحقیقات کی پیشکش مسترد کر دی۔

فلسطین کے صدر محمود عباس نے اسرائیل کو الجزیرہ کی خاتون صحافی ابوعاقلہ کے قتل کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ وہ واقعے کی مشترکہ تحقیقات کی پیشکش کو قبول نہیں کرتے۔

انہوں نے کہا کہ ابوعاقلہ کے قتل کی مکمل ذمہ داری اسرائیل پر عائد ہوتی ہے لہذا وہ اسرائیل پر بالکل بھروسہ نہیں کرتے کیونکہ اسرائیل نے ایک جرم کیا ہے۔

اسرائیلی فوج نے صحافی شریں کا تابوت زمین پر گرا دیا

فلسطینی صدر نے اعلان کیا کہ وہ شہید صحافی اور اسرائیل کے اس جیسے جرائم کے خاتمے کے لیے فوری طور پر عالمی عدالت انصاف سے رجوع کریں گے۔

دو روز قبل اسرائیلی فورسز نے شیریں ابو عاقلہ کو گولی مار کر شہید کر دیا تھا۔ صحافی شیریں کو رپورٹنگ کے دوران گولی لگی، زخمی حالت میں انہیں اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لا کر جاں بحق ہوگئی تھیں۔

الجزیرہ ٹی وی کا کہنا تھا کہ اسرائیلی فورسز نے شیریں کو اس وقت سر میں گولی ماری جب وہ مقبوضہ مغربی کنارے کے جینین میں رپورٹنگ کر رہی تھیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں