The news is by your side.

اسرائیلی فوج کی فائرنگ، فلسطینی نوجوان شہید، 30 زخمی

نابلس: اسرائیلی فوج نے فائرنگ کر کے ایک اور فلسطینی نوجوان کو شہید کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق جمعرات کو اسرائیلی مقبوضہ مغربی کنارے کے شہر نابلس میں اسرائیل فوج کی فلسطینیوں پر فائرنگ سے 18 سالہ فلسطینی نوجوان شہید ہو گیا، جب کہ 30 زخمی ہو گئے۔

فلسطینی ہلال احمر نے بتایا کہ جمعرات کی صبح جھڑپوں میں کم از کم 30 فلسطینی زخمی ہوئے، جن میں سے چار کو اسرائیلی فوج نے براہ راست گولیاں ماریں، جن میں سے 3 کی حالت تشویش ناک ہے۔

فلسطینی طبی ماہرین نے شہید ہونے والے نوجوان کی شناخت اٹھارہ سالہ وسیم نصر خلیفہ کے نام سے کی ہے، جو مغربی کنارے کے سب سے بڑے پناہ گزین کیمپ بلاتہ سے تھا۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ جھڑپیں اس وقت شروع ہوئیں جب اسرائیلی افواج مقبرہ یوسف پر جانے والے یہودی عبادت گزاروں کی حفاظت کے لیے پہنچیں، اسرائیلی فورسز نے دعویٰ کیا ہے کہ فلسطینیوں نے فائرنگ کی تھی، تاہم اسرائیلی فوج نے خبر رساں ادارے روئٹرز کو بتایا کہ وہ اس واقعے کی جانچ کر رہی ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے بھی شمالی شہر نابلس میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے تین فلسطینی شہید ہو گئے تھے۔

ادھر جھڑپوں کے واقعے کے چند گھنٹے بعد رام اللہ میں اسرائیلی فورسز نے 7 فلسطینی این جی اوز پر دھاوا بول کر انھیں سیل کر دیا، صہیونی فورسز سارا سامان اٹھا کر ساتھ لے گئیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں