The news is by your side.

Advertisement

عمران خان کو وزیراعظم بنا کر گھر چلا جاؤں گا، جہانگیر ترین

اسلام آباد: تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر ترین نے کہا ہے کہ عمران خان کو وزیراعظم بنا کر گھر چلا جاؤں گا، نظر ثانی اپیل دائر کروں گا اگر فیصلہ حق میں آیا تو بہتر ورنہ گھر ہی بیٹھوں گا۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کی رہائش گاہ بنی گالہ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ ’پنجاب میں ہمارے 131 اراکین اسمبلی ہوچکے آج رات تک مزید ایم پی ایز بھی شامل ہوجائیں گے‘۔

پی ٹی آئی کے رہنما نے بڑااعلان کرتے ہوئے کہا کہ ’ نااہلی کے فیصلے پر میرے پاس اپیل کا حق موجود ہے، عدالت میں درخواست دائر کروں گا اگر حق میں فیصلہ آیا تو بہتر ورنہ گھر بیٹھوں گا‘۔

مزید پڑھیں: عمران خان کو ڈی چوک پر حلف اٹھانے کا مشورہ

دوسری جانب وفاق اور پنجاب میں حکومت بنانے کے لیے آزاد امیدوار تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کررہے ہیں، کچھ دیر قبل ملتان سے کامیاب ہونے والے آزاد امیدوار شیخ سلمان نعیم نے جہانگیر ترین اور علیم خان سے ملاقات کر کے عمران خان کی حمایت کا اعلان کیا۔

واضح رہے کہ الیکشن 2018 میں عمران خان ملک کی بڑی سیاسی جماعتوں کو بڑی شکست دے کر وفاق میں حکومت سازی کی پوزیشن میں آگئے ہیں جس کے لیے تیاریاں عروج پر ہیں۔

کابینہ میں کن لوگوں کو شامل نہیں کیا جائے گا؟

علاوہ ازیں تحریک انصاف کے ذرائع کا کہنا ہے کہ عمران خان نے نیب زدہ منتخب امیدواروں کو کابینہ میں شامل نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جب تک مذکورہ ممبران کے خلاف تحقیقات ہیں وہ کسی وزارت یا مرکزی و صوبائی کابینہ کا حصہ نہیں بن سکیں گے۔

یہ بھی پڑھیں: افغان صدر کا عمران خان کو ٹیلی فون، انتخابات میں کامیابی پر مبارک باد

اس ضمن میں عمران خان نے منتخب ممبران کی نیب میں جاری کیسز کی تفصیلات بھی طلب کرلیں جبکہ پارٹی ذرائع نے اس بات کی تصدیق بھی کی ہے کہ کابینہ کی تشکیل میں تاخیر کی اہم وجہ امیدواروں کی چھان بین ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں