The news is by your side.

Advertisement

جہانگیر ترین اور علی ترین کی عبوری ضمانت میں31 مئی تک توسیع

لاہور :سیشن کورٹ نے کارپوریٹ فراڈ کیس میں جہانگیرترین اور علی ترین کی عبوری ضمانت میں31مئی تک توسیع کردی اور کہا ایف آئی اے نے آئندہ سماعت پرتفتیش مکمل نہ کی گئی توشوکازجاری کیےجائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق جہانگیر ترین اور ان کے صاحب زادے علی ترین کے خلاف کارپوریٹ فراڈ، منی لانڈرنگ اور جعلی اکاؤنٹس کیس میں عبوری ضمانت میں توسیع کی درخواست پر آج سیشن عدالت اور بینکنگ کورٹ میں سماعت ہوئی۔

جہانگیرترین اورعلی ترین عدالت میں پیش ہوئے ، اس موقع پرہم خیال گروپ کے ارکان اسمبلی کی بڑی تعداد بھی عدالت پہنچی ، جن میں رکن قومی اسمبلی راجہ ریاض،صوبائی وزیر نعمان لنگڑیال، ایم این ایزمیں راجہ ریاض،سمیع گیلانی، صاحبزادہ محمودسلطان ، صوبائی اسمبلی اراکین میں نذیر بلوچ ، چوہدری  زواروڑائچ،سلمان نعیم ، ایم پی ایزخرم لغاری،نذیرچوہان،اجمل چیمہ،سجادوڑائچ ،صوبائی وزیر طاہر مجیدرندھاوا شامل تھے۔

کارپوریٹ فراڈ کیس میں سیشن کورٹ نے جہانگیرترین اور علی ترین کی عبوری ضمانت میں31مئی تک توسیع کردی ، عدالت کیجانب سےدونوں مقدمات میں عبوری ضمانت میں توسیع کی گئی ، وکیل جہانگیرترین بیرسٹرسلمان نے کہا ایف آئی اے کےساتھ مکمل تعاون کررہےہیں۔

جس پر جج حامدحسین نے کہا ایف آئی اےفوری تفتیش مکمل کرے،مزیدوقت نہیں دیاجائےگا، آئندہ سماعت پرتفتیش مکمل نہ کی گئی توشوکازجاری کیےجائیں گے۔

دوسری جانب جہانگیرترین،علی ترین اور دیگرکیخلاف جعلی اکاؤنٹس کیس کی سماعت ہوئی ، بینکنگ جرائم کورٹ کےجج امیرمحمدخان نے کیس کی سماعت کی ، جہانگیرترین،علی ترین اوردیگرملزمان عدالت میں پیش ہوئے۔

دوران سماعت وکیل جہانگیر ترین نے بتایا کہ کورونااورعید کی وجہ سےمشکلات پیش آئیں ،مشکلات کے باوجودہم نےتمام ریکارڈجمع کیا ، چھٹیاں تھیں بینک بندتھےمگرپھر بھی ساراریکارڈایف آئی اےکودےدیا، تمام ریکارڈعدالت میں پیش کریں گے، ایک ایک روپےکاریکارڈ،منی ٹریل ایف آئی اے کوفراہم کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں