The news is by your side.

Advertisement

امریکہ نےشام کے20فیصد طیارےتباہ کردیے‘ جیمزمیٹس

واشنگٹن : امریکی وزیردفاع کا کہناہےکہ شام میں کیمیائی ہتھیاروں کےحملوں کےجواب میں کیےگئےامریکی فضائی حملوں میں شام کے قابلِ استعمال طیاروں میں سے20 فیصد تباہ کر دیےگئے ہیں۔

تفصیلات کےمطابق امریکہ کے وزیر دفاع جیمز میٹس کا کہنا ہےکہ امریکہ نے شام کے20فیصد طیارے تباہ کردیے ہیں اور شام کو کیمیائی ہتھیاروں کےدوبارہ استعمال کا مشورہ مہنگا پڑے گا۔

امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس کاکہناہےکہ امریکہ کی جانب سے جانچ پرکھ کر اٹھائے گئے اقدام سے ایندھن، بارود اور فضائی دفاع کی صلاحتیوں کو نشانہ بنایا گیا جس کی وجہ سے شام کے20 فیصد فعال طیارے تباہ ہوئے۔

جیمز میٹس کاکہناتھاکہ شامی حکومت کے پاس شعیرات کے ہوائی اڈے پر اب جہازوں میں ایندھن بھرنے یا مسلح ہونے کی صلاحیت نہیں رہی اور نہ ہے رن وے قابلے استعمال رہا ہے۔

امریکی وزیردفاع نے کہا ان حملوں سے صاف ظاہر ہے کہ امریکہ شامی صدر بشارالاسد کی کی جانب سے معصوم شہریوں و کیمیائی ہتھیاروں سے نشانہ بنائے جانے کی حمایت نہیں کرتا۔

دوسری جانب شام فوج نے امریکی حملے کے بعد بڑے پیمانے پر نقصان کا اعتراف کیا تھا تاہم روسی وزیرِ دفاع کا کہنا تھا کہ صرف چھ شامی فضائی فوج کے جہاز اور کئی عمارتیں تباہ ہوئیں جبکہ شعیرات کے اڈے پر صرف 23 میزائل گرے۔


شام میں کیمیائی حملے میں مرنے والوں کی تعداد 70 ہوگئی


یاد رہےکہ گزشتہ ہفتےشام کے شمال مغربی حصے میں واقع باغیوں کے زیر کنٹرول علاقے میں جنگی جہازوں کے ذریعے کیے گئے مبینہ مہلک گیس حملے میں متعدد بچوں سمیت 70 سےزائدافراد ہلاک ہوگئے تھے۔


امریکہ کاشام کےخلاف فضائی کارروائی کا آغاز


واضح رہےکہ بعدازاں امریکہ نےشامی حکومت کےخلاف کیمیائی حملے کے جواب میں شام پر60 ٹام ہاک کروزمیزائل داغےتھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں