The news is by your side.

Advertisement

جاپان سے ویزے جاری کرنے کا مطالبہ

ٹوکیو: ملکی اور غیر ملکی پروفیسرز اور طلبہ نے جاپان سے ویزے جاری کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق جاپان اور امریکا کے پروفیسرز اور طالب علم حکومتِ جاپان سے درخواست کر رہے ہیں کہ وہ طلبہ اور محققین کے لیے ویزوں کا اجرا بحال کرے۔

جاپان میں کرونا وائرس کی عالمگیر وبا کے باعث اس قسم کے ویزوں کا اجرا معطل کیا جا چکا ہے، تاہم جاپانی یونیورسٹیز کی ایک تنظیم نے نیویارک میں جاپان کے قونصلیٹ جنرل یامانواُچی کانجی کو جمعرات کے روز ایک درخواست پیش کر کے ویزوں کا اجرا بحال کرنے کا مطالبہ کر دیا ہے۔

اس درخواست پر امریکا اور جاپان کے تقریباً 650 پروفیسرز اور طلبہ نے دستخط کیے ہیں، درخواست میں کہا گیا ہے کہ تبادلہ پروگراموں کی معطلی سے بیرون ملک تعلیمی اداروں کے ساتھ تعلقات کو نقصان پہنچ رہا ہے۔

درخواست پر امریکا اور جاپان کے تقریباً 650 پروفیسرز اور طلبہ نے دستخط کیے ہیں

یونیورسٹیز کی تنظیم کی جانب سے یہ مؤقف بھی پیش کیا گیا ہے کہ غیر ملکی طالب علموں کی تعداد میں کمی سے جاپانی یونیورسٹیز کی بین الاقوامیت متاثر ہو رہی ہے۔

تنظیم کے نمائندے کا کہنا تھا کہ کچھ طالب علموں کو جاپانی یونیورسٹیز میں آن لائن کورسز میں شرکت کرنے کے لیے رات بھر جاگنا پڑ رہا ہے اور یہ ان کے لیے بہت زیادہ دباؤ کا باعث ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ کچھ طلبہ جو جاپان نہیں جا سکتے وہ تعلیم حاصل کرنے کے لیے دوسرے ممالک کا انتخاب کر رہے ہیں۔ واضح رہے کہ جاپانی حکومت اس عالمگیر وبا کے دوران فی الحال غیر ملکی طلبہ اور محققین کو ملک میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دے رہی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں