عاصم کیپری اوراسحاق بوبی کی جےآئی ٹی، حساس ادارے کے اعتراضات -
The news is by your side.

Advertisement

عاصم کیپری اوراسحاق بوبی کی جےآئی ٹی، حساس ادارے کے اعتراضات

کراچی : ہائی پروفائل کیسزکے گرفتار ملزمان عاصم کیپری اوراسحاق بوبی کی جےآئی ٹی مکمل کرلی گئی۔ حساس ادارے نے اختلافات کرتے ہوئے تاریخ میں پہلی بار اعتراضات اٹھادیئے۔

تفصیلات کے مطابق معروف قوال امجد صابری قتل سمیت ہائی پروفائل مقدمات میں گرفتار ملزمان عاصم کیپری اوراسحاق بوبی کی جےآئی ٹی مکمل کرلی گئی، تاریخ میں پہلی بار ہائی پروفائل جے آئی ٹی پر حساس ادارے نے اعتراضات اٹھا دئیے۔

آٹھ صفحات کا اختلافی نوٹ جے آئی ٹی سے منسلک کردیا گیا، رپورٹ کے مطابق مقدمات میں عینی شاہدین ،موقعہ معائنہ اور ملزمان کے بیانات میں تضادات ہیں جرائم اور ان کے حقائق جاننے کے بہانے الزامات کو درست ثابت کرانے پر زور دیا گیا۔

ملزمان پر پہلے انسٹھ کیسز تھے جو بعد میں پینتالیس ہوئے پھر پچیس کردیئے گئے،حساس ادارے نے اعتراض اٹھایا کہ تبت سینٹر، پارکنگ پلازہ سمیت اہم واقعات میں ملزمان کے بیانات میں فرق ہے، بار بار اصرار کے باوجود ملزمان کی کیس فائل فراہم نہیں کی گئی۔

حساس اداروں کے نوٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ محکمہ داخلہ کے حکم پر چھ افسران پر مشتمل جے آئی ٹی بنائی گئی تھی لیکن احکامات کے بر خلاف دس افسران جے آئی ٹی میں شامل کئے گئے۔

ملزمان کا بیان ہے کہ انہوں نے ٹارگٹ کلنگ میں ہمیشہ نائن ایم ایم استعمال کیا، جبکہ بعض واقعات میں تیس بور کے خول بھی ملے ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اطمینان بخش تفتیش سے قبل ہی وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ سے ملزمان کی گرفتاری سے متعلق پریس کانفرنس کروادی گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں