The news is by your side.

Advertisement

لاہور جوہرٹاؤن دھماکے کی تحقیقات کے لئے جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ

لاہور: جوہر ٹاؤن دھماکے کی تحقیقات کےلئےجےآئی ٹی بنانے کا فیصلہ کرلیا ، ٹیم دھماکےسےمتعلق مکمل رپورٹ مرتب کرے گی اور عینی شاہدین کے بیانات قلمبند کرے گی۔

تفصیلات کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ لاہور جوہرٹاؤن دھماکے کی تحقیقات کےلئےجےآئی ٹی بنےگی، جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم دھماکےسےمتعلق تحقیقات کرے گی۔

ذرائع نے کہا ہے کہ جے آئی ٹی5ممبرپرمشتمل ہوگی جبکہ سربراہ ڈی آئی جی رینک کاافسرہوگا، جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم دھماکےسےمتعلق مکمل رپورٹ مرتب کرنے کے ساتھ ساتھ عینی شاہدین کے بیانات قلمبند کرے گی۔

ذرائع کے مطابق جے آئی ٹی 15 روزمیں دھماکے سے متعلق رپورٹ اعلیٰ حکام کو دے گی۔

یاد رہے جوہر ٹاؤن دھماکے میں ملک دشمن ایجنسی ملوث نکلی تھی ، آئی جی پنجاب انعام غنی کا کہنا تھا کہ دھماکےمیں براہ راست ملوث افرادکوگرفتارکرلیاگیا، 10سےقریب ملزمان واقعےمیں ملوث ہیں جبکہ گاڑی کی مرمت کرنے والے افراد کو بھی گرفتارکیا گیا ہے اور ساتھ ہی واقعے کے ماسٹرمائنڈافراد کی شناخت بھی مکمل ہوچکی ہے۔

آئی جی پنجاب نے مزید بتایا تھا کہ واقعے سے متعلق مزید تفتیش کے لیے جے آئی ٹی تشکیل دیدی گئی ہیں، ملزمان کا سابقہ کرمنل ریکارڈ بھی چیک کیا جا رہا ہے اور دیگر دہشت گردی کی وارداتوں میں ملوث افراد تک بھی پہنچیں گے، ملزمان کے ماضی میں ایسے واقعات میں ملوث ہونےکی تحقیق کررہےہیں۔

خیال رہے لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں دھماکے سے 3 افراد جاں بحق اور 24 زخمی ہوئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں