The news is by your side.

بائیڈن نے ٹرمپ کو امریکا کیلیے ’’خطرہ‘‘ قرار دیدیا

امریکی صدر جو بائیڈن نے سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کے حامیوں کو ’شدت پسند‘ قرار دیتے ہوئے انہیں امریکی ریاست کی بنیادوں کیلیے خطرہ قرار دیدیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق جمعرات کی شب امریکی صدر جو بائیڈن نے قوم سے خطاب میں کہا کہ ’ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کے ری پبلکن حامی شدت پسند ہیں جو ہماری ریاست کی بنیادوں کے لیے خطرے کا باعث ہیں جن سے مساوات اور جمہوریت کو خطرہ ہے اور اگر ہم اس بات کو نہیں سمجھیں گے تو خود اپنا نقصان کریں گے۔

اے آروائی نیوز براہِ راست دیکھیں live.arynews.tv پر

ریاست فلاڈیلفیا میں خطاب کرتے ہوئے جو بائیڈن نے ٹرمپ کے ’امریکا کو دوبارہ عظیم بنائیں‘ کے نظریے کو اپنانے والے اُن ریپبلکنز پر کڑی تنقید کی اور کہا کہ ’وہ غصے کو گلے لگاتے ہیں۔ وہ افراتفری میں پروان چڑھتے ہیں۔ وہ سچ کی روشنی میں نہیں بلکہ جھوٹ کے سائے میں رہتے ہیں۔‘

امریکی صدر نے کیپیٹل ہل پر گزشتہ سال ٹرمپ کے حامیوں کے حملے کے علاوہ سخت گیر قدامت پسندوں کی طرف سے اسقاط حمل کے حقوق پر ملک گیر حملے کا حوالہ بھی دیا اور کہا کہ مانع حمل سے لے کر ہم جنس شادی تک دیگر آزادیوں کے چھینے جانے کے خدشات ہیں اور ری پبلکن کی ماگا فورسز اس ملک کو پیچھے لے جانے کے لیے روبہ عمل ہیں۔‘

بائیڈن کا کہنا تھا کہ امریکا میں سیاسی تشدد کے لیے کوئی جگہ نہیں ہے، کبھی نہیں، بات ختم، شہریوں کو امریکی جمہوریت کا دفاع کرنا ہوگا۔ یہ لوگ ’اس ملک کے لیے خطرہ ہیں۔ اس کی حفاظت کریں اور اس کے لیے کھڑے ہو جائیں، ساتھ ہی انہوں نے اپنے حامیوں پر زور دیا کہ وہ مخالفین پر جوابی وار کریں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں