The news is by your side.

Advertisement

لاپتا ہونے والے پریزائیڈنگ افسران کے خلاف جوڈیشل کارروائی کا فیصلہ

لاہور: این اے 75 ڈسکہ میں پریزائیڈنگ افسران کے لاپتا ہونے کے معاملے پر سامنے آنے والی انکوائری رپورٹ پر الیکشن کمیشن نے جوڈیشل کارروائی کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق لاپتا پریزائیڈنگ افسران کے معاملے پر جوائنٹ الیکشن کمشنر پنجاب کی انکوائری پر کھلی عدالت میں سماعت ہوگی، اور الیکشن کمیشن کی جانب سے ذمہ داران کو باضابطہ نوٹس جاری کیے جائیں گے۔

یاد رہے کہ الیکشن کمیشن کے رواں ہفتے ہونے والے اجلاس میں اس رپورٹ کا جائزہ لیا گیا تھا، الیکشن کمیشن نے ڈسکہ میں نتائج روک کر دوبارہ پولنگ کا حکم دیا تھا۔

واضح رہے کہ الیکشن کمیشن کی رپورٹ ميں انکشاف کیا گیا تھا کہ این اے 75 ڈسکہ کے ضمنی اليکشن ميں 20 لاپتا پریزائيڈنگ افسران مشکوک جگہ پر ایک ساتھ پائے گئے تھے، وہ اگلی صبح ایک ساتھ نمودار ہوئے تھے۔

بلدیاتی انتخابات

دوسری طرف بلدیاتی انتخابات کے لیے عدم تعاون پر الیکشن کمیشن نے وفاق اور صوبوں کو احکامات جاری کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن پہلے خیبر پختون خوا میں نومبر میں مرحلہ وار انتخابات کروانے کے لیے احکامات جاری کرے گا۔

الیکشن کمیشن نے اسلام آباد اور صوبوں میں بلدیاتی انتخابات کے لیے وفاق سے فنڈز بھی مانگ لیے ہیں، الیکشن کمیشن نے وزارت خزانہ کو مراسلہ ارسال کر دیا، جس میں کہا گیا ہے کہ بلدیاتی انتخابات کے لیے مختص فنڈز کا جلد اجرا کیا جائے۔

ادھر سندھ سرکار کے مرتضیٰ وہاب کہتے ہیں کہ مردم شماری کا مسئلہ حل ہونے تک بلدیاتی انتخابات نہیں ہو سکتے، اگر الیکشن کمیشن نے حکم دیا تو فروری مارچ تک انتخابات کرا دیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں