The news is by your side.

Advertisement

بلوچستان عوامی پارٹی کا جمعیت علماء اسلام کو بڑا دھچکا

کوئٹہ: جمیعت علماء اسلام ف کے رہنما نور خان ترین ایڈوکیٹ نے بلوچستان عوامی پارٹی میں شمولیت کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق جمیعت علماء اسلام کے صوبائی رہنما نے بی اے پی کے جنرل سیکریٹری کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے جے یو آئی سے راہیں جدا کرنے کا اعلان کیا۔

اُن کا کہنا تھا کہ جے یو آئی ف میں گئی گروپ بن چکے جس کے باعث اب کام کرنا یا اُس جماعت کے ساتھ چلنا ناممکن ہوگیا۔ اس موقع پر آزاد امیدوار محمد صدیق نے بھی بی این پی میں شمولیت کا اعلان کیا۔

بی اے پی کے جنرل سیکریٹری کا کہنا تھا کہ لوگ ہمارے کارواں میں شامل ہورہے ہیں، بلوچستان کی تمام سیاسی جماعتیں بلوچستان عوامی پارٹی سے خوفزدہ ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ بی اےپی کسی جماعت کے خلاف نہیں بلکہ صوبے کی ترقی کے لیے بنائی گئی، ہم صرف وہ اقدامات کررہے ہیں جس کی بدولت بلوچستان کا احساس محرومی دور ہو۔

الیکشن اتحاد

دوسری جانب بلوچستان نیشنل پارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی نے بلوچستان کی دو نشستوں پر اتحاد کا اعلان کردیا جس کے مطابق اے این پی این اے 264 پر بی این پی کے امیدوار کی حمایت کرے گی جبکہ پی بی 24 پر اے این پی امیدوار نعیم بازئی کو ووٹ دیے جائیں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں