The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر: اذان اور نماز جمعہ پر پابندی عائد

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں کشمیری نوجوانوں کی شہادت اور حریت رہنماؤں کی گرفتاری پر نماز جمعہ کے بعد احتجاج کیا جائے گا۔ قابض فوج نے اذان اور نماز جمعہ پر بھی پابندی عائد کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر کی لہو لہو وادی میں آزادی کے متوالے جانوں کا نذرانہ پیش کر رہے ہیں۔

بھارتی فورسز کے ہاتھوں بے گناہ کشمیری نوجوانوں کی شہادت پر مقبوضہ وادی سراپا احتجاج ہے۔

کشمیریوں کی آواز کو دبانے کے لیے کٹھ پتلی انتظامیہ اور بھارتی فورسز نے اوچھے ہتھکنڈے اپنانے شروع کردیے۔ بلا جواز گرفتاریوں اور گھر گھر تلاشی کے بہانے چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کرنے کا سلسلہ بھی عروج پر ہے۔

حریت رہنماؤں کی اپیل پر نماز جمعہ کے بعد احتجاج کیا جائے گا، تاہم قابض فوج میر واعظ عمر فاروق، یاسین ملک اور علی گیلانی کو احتجاج میں شرکت سے روکنے کے لیے پہلے ہی گرفتار کر چکی ہے۔

مزید پڑھیں: حریت رہنما ایک بار پھر گرفتار

بھارتی پولیس نے گزشتہ روز حریت رہنماؤں کو اس وقت گرفتار کیا تھا جب وہ سرینگر کے علاقے حیدر پورہ میں احتجاج کررہے تھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں