The news is by your side.

Advertisement

جون کا مہینہ پاکستان اسٹاک ایکسچینج کیلئےڈراؤنا خواب بن گیا

کراچی : جون کا مہینہ پاکستان اسٹاک ایکسچینج کیلئے ڈراؤنا خواب بن گیا، بیس دن میں مارکیٹ ساڑھے پانچ ہزار پوائنٹس نیچے آگئی، بھاری مالی نقصان نے سرمایہ کاروں کے ہوش اڑا دیئے۔

تفصیلات کے مطابق رواں ماہ پاکستان اسٹاک ایکسچینج کیلئے بدترین مندی کا مہینہ ثابت ہو رہا ہے، یکم سے 20 جون تک صرف 20 دن میں مارکیٹ تیسری مرتبہ ڈیڑھ ہزار سے زائد پوائنٹس کی مندی کا شکار اور مجموعی طور پر ساڑھے پانچ ہزار پوائنٹس نیچے آچکی ہے۔

بارہ جون کو پاکستان اسٹاک ایکسچینج 1855 پوائنٹس کی تاریخی گراوٹ کا شکار ہوئی تھی جبکہ یکم جون کو بھی مارکیٹ میں1810 پوائنٹس کی بڑی مندی دیکھی گئی تھی۔

گذشتہ روز پھر مارکیٹ میں 1600سے زائد پوائنٹس کی مندی پر کاروبار کا اختتام ہوا اور ہنڈریڈانڈیکس 1679 پوائنٹس گر کر 44914 پوائنٹس پر بند ہوا۔

رواں ماہ پاکستان اسٹاک ایکسچینج کا ایم ایس سی آئی میں نو سال بعد فرنٹئیرمارکیٹ سے ایمرجنگ مارکیٹ کا درجہ حاصل کرنا بھی ابھی تک سود مند ثابت نہیں ہوسکا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں