The news is by your side.

Advertisement

کراچی، گیارہ سالہ بچے سے دکاندار کی بدفعلی، زیادتی کی تصدیق

کراچی: شہر قائد میں گیارہ سالہ بچے کو دکاندار نے اپنی ہوس کا نشانہ بنا ڈالا۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز کے مطابق کراچی کے علاقے کلفٹن میں واقع گزری میں موبائل شاپ پر کام کرنے والے گیارہ سالہ بچے کو دکاندار نے زیادتی کا نشانہ بنایا۔

بچے کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹر نے میڈیکل کیا تو رپورٹ میں زیادتی ثابت ہوگئی۔ پولیس نے واقعے کا مقدمہ درج کر کے مفرور ملزم کی تلاش شروع کردی ہے۔

اہل خانہ نے بتایا کہ متاثرہ بچہ موبائل کی دکان پر کام کرتا تھا جہاں اُسے دکاندار نے زیادتی کا نشانہ بنایا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل چند روز پہلے کراچی کے علاقے پی آئی بی کالونی میں پانچ سالہ مروا نامی بچی اپنے گھر سے چیز لینے کے لیے نکلی تو وہ غائب ہوگئی تھی۔

اہل خانہ نے گمشدگی کا مقدمہ درج کرایا مگر پولیس بچی کو تلاش نہ کرسکی البتہ اگلے روز پرانی سبزی منڈی کے قریب کچرے سے بھرے خالی پلاٹ سے بچی کی سوختہ لاش برآمد ہوئی تھی۔ڈاکٹرز کے مطابق بچی کو زیادتی کے بعد سر پر بھاری چیز مار کر قتل کیا گیا اور اُس کے جسم کو کیمیکل سے جلایا بھی گیا تھا۔

علاوہ ازیں ایک روز قبل برزٹا لائن کی رہائشی بچی کی نعش ملی تھی، پولیس نے بتایا تھا کہ متاثرہ بچی کو اغوا کے بعد زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کیا گیا ہے، میڈیکل رپورٹ میں زیادتی کی تصدیق ہوئی تھی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں