The news is by your side.

Advertisement

کراچی کی 352 عمارتیں مخدوش اور حساس قرار

کراچی: سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے مون سون کی بارشوں میں کسی بھی بڑے سانحے سے محفوظ رکھنے کے لیے شہر قائد کی 352 عمارتوں کو مخدوش اور حساس قرار دیتے ہوئے انہیں فوری طور پر خالی کرنے کا نوٹس جاری کردیا۔

تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں مون سون کی بارشوں کا سلسلہ شروع ہوچکا اس ضمن میں سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے کسی بھی بڑے حادثے سے بچنے کے لیے سندھ کی 450 عمارتوں کو انتہائی حساس قرار دیا۔

ترجمان ایس بی سی اے کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق کراچی میں حساس عمارتوں کی تعداد 352 ہے جن میں سے صدر ٹاؤن میں 243، لیاری 40 اور لیاقت آباد میں 27 عمارتیں شامل ہیں۔

مزید پڑھیں: کراچی:سینکڑوں عمارتیں مخدوش، بڑے حادثے کا خطرہ

علاوہ ازیں حیدرآباد میں 80، میرپور خاص میں 7، سکھر میں 7، لاڑکانہ میں 7 عمارتیں مخدوش ہیں جو کسی بھی وقت بڑے حادثے کا سبب بن سکتی ہیں۔

سندھ بلڈنگ کنٹرل اتھارٹی کی جانب سے مذکورہ عمارتوں کے مکینوں کو نوٹس جاری کیے جارہے ہیں علاوہ ازیں سوک سینٹر میں ایک شکایتی سیل بھی قائم کردیا گیا۔

ایس بی سی اے نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ تعاون کریں اور کسی بھی بڑے حادثے سے محفوظ رہنے کے لیے فوری طور پر عمل کریں۔

اسے بھی پڑھیں: کراچی میں کہیں تیز اور کہیں ہلکی بارش، موسم خوشگوار

واضح رہے کہ کراچی اور سندھ میں سینکڑوں مخدوش عمارتیں موجود ہیں جو کسی بھی وقت سنگین حادثے کا سبب بن سکتی ہیں، متبادل انتظام نہ ہونے کی وجہ سےعوام خستہ حال عمارتوں میں رہنے پر مجبور ہیں۔

خیال رہےکہ شہر قائد میں اب تک مخدوش عمارتوں کے زمین بوس ہونے کے کئی واقعات رونما ہوچکے جن میں انسانی جانوں کا ضیاع بھی ہوا، سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی مخدوش عمارتوں کو خالی کرانے میں اب تک ناکام رہی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں