site
stats
پاکستان

کراچی کی سڑکوں پر خونی ڈمپرزکا راج ، 2 افراد جاں بحق

کراچی : شہر قائد میں قانوناً رات دس بجے سے پہلے ڈمپر اور بڑے ٹرکوں کی آمد ممنوع ہے لیکن صبح سے شام تک جا بجا ڈمپر ناصرف کہ سڑکوں پرنظر آتے ہیں بلکہ خونی بیشترخونی حادثات بھی انہی کے سبب رونما ہوتے ہیں۔

کراچی میں قانونی طور پر بڑے ٹرک اور ڈمپرز کے داخلے پر پابندی عائد ہے لیکن شہر کے کسی حصے میں اس قانون پر عمل ہوتا دکھائی نہیں دیتا، جس کے نتیجے میں آج ناتھا خان پر ٹریفک حادثے میں دو افراد زندگی کی بازی ہار گئے۔

گزشتہ روز ناظم آباد نمبر سات بس اسٹاپ کے قریب تیز رفتار ڈمپر نے موٹر سائیکل سوار نوجوان کو کچل دیا تھا جبکہ بلدیہ ٹاؤن میں گاڑی کے ٹکر سے موٹر سائیکل سوار نوجوان زندگی کی بازی ہارگیا تھا۔

شیر شاہ کے علاقے میں بھی تیز رفتار واٹر ٹینکر پل سے نیچے گرنے سے ایک شخص جاں بحق اور پانچ افراد زخمی ہوئے تھے۔


مزید پڑھیں : شیرشاہ پل سے پانی کا ٹینکر گرنے سے1شخص جاں بحق


ٹریفک کنٹرول کرنے کے ذمہ دارٹریفک پو لیس کے اہلکار کونوں کھدروں میں کھڑے ہو کر شکار کا انتظار کرتے رہیں گے اور عوام ان بے رحم ٹرکس اور ڈمپرز کے ہا تھوں سسک سسک کر تڑپتے اور مرتے رہیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top