The news is by your side.

Advertisement

کراچی، مہنگا دودھ فروخت کرنے والوں‌ کے خلاف کریک ڈاؤن کا آغاز

کراچی: شہر قائد میں مہنگا دودھ فروخت کرنے والوں کے خلاف شہری انتظامیہ نے کریک ڈاؤن کا آغاز کردیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق کمشنر کراچی افتخار شالوانی کی ہدایت پر انتظامیہ نے مہنگا دودھ فروخت کرنے والے کے خلاف کارروائی کی اور اُن پر جرمانے عائد کیے۔

انتظامیہ نے  76دودھ فروشوں پر 4 لاکھ 56 ہزار روپے سے زائد جرمانہ عائد کیا۔

کمشنر کراچی کے ترجمان کی جانب سے جاری اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ  ضلع جنوبی میں 13دودھ فروشوں کےخلاف کارروائی کر کے ایک لاکھ 15ہزار روپے سے زائد جرمانہ عائد کیا، ضلع غربی میں 16دودھ فروشوں کو 41 ہزار 500 روپے جرمانے کے چالان دیے گئے۔

مزید پڑھیں : دودھ کی قیمت میں 10، سبزیوں کی قیمتوں میں 50 روپے کا اضافہ

اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ ضلع وسطی میں 13دودھ فروشوں پرایک لاکھ 7 ہزار روپے، ملیر میں 11 دودھ فروشوں پر 41 ہزار روپے جبکہ ضلع  شر قی میں دودھ فروشوں پر ایک لاکھ 20 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔

کمشنر کراچی نے تمام ڈپٹی کمشنر کو ہدایت کی کہ وہ مقررہ ریٹ سے زائد قیمت وصول کرنے والے دودھ فروشوں کے خلاف کارروائی کو جاری رکھیں اور سرکاری قیمت پر دودھ کی فروخت کو یقینی بنائیں۔

یاد رہے کہ ہر سال ڈیری فارمرز اپنی من مانی کرتے ہوئے دودھ کی قیمت بڑھا دیتے ہیں، گزشتہ دنوں فارمرز نے دودھ کی فی کلو قیمت میں دس روپے کا اضافہ کردیا جس کے بعد ایک کلو قیمت 120 روپے فی لیٹر تک پہنچ گئی، انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ فہرست میں دودھ کی قیمت پچانوے روپے لیٹر ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں