The news is by your side.

Advertisement

کراچی، جماعت اسلامی کی یوم استحصال کشمیر ریلی میں‌ دھماکا، 39 افراد زخمی

کراچی: شہر قائد میں جماعت اسلامی کی یوم استحصال کشمیر ریلی کے قریب دھماکا ہوا ہے جس کے نتیجے میں 39 افراد زخمی ہوگئے۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں واقع بیت المکرم مسجد کے قریب جماعت اسلامی کی ریلی میں دھماکے کے نتیجے میں 39 افراد زخمی ہوگئے، پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر پہنچ گئی۔

ریسکیو ذرائع کا کہنا ہے کہ ریلی کے قریب دھماکے کے باعث 39 افراد زخمی ہوگئے، زخمیوں کو طبی امداد کے لیے فوری اسپتال منتقل کیا جارہا ہے۔

ایس ایس پی ایسٹ کا کہنا ہے کہ ابتدائی اطلاعات ہیں کہ موٹر سائیکل سوار دستی بم پھینک کر فرار ہوئے ہیں۔

جماعت اسلامی کے رہنما معراج الہدیٰ کا کہنا تھا کہ دھماکا کرکے ہمارے حوصلے پست نہیں کیے جاسکتے، ریلی جاری رہے گی۔

امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان کا کہنا تھا کہ جماعت اسلامی کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کررہی ہے، را کے ایجنٹوں نے ریلی میں حملہ کرکے بزدلانہ کارروائی کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بزدلانہ کارروائیوں سے جذبوں کو ختم نہیں کیا جاسکتا، کارکن پولیس انتظامیہ اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ تعاون کریں۔

محکمہ صحت سندھ کا کہنا ہے کہ جناح اسپتال میں 7 زخمیوں کو لایا گیا ہے، 11 زخمی آغا خان اسپتال میں زیر علاج ہیں، 10 زخمیوں کو لیاقت نیشنل اسپتال منتقل کیا گیا، 5 زخمی المصطفیٰ اسپتال میں زیر علاج ہیں۔

واضح رہے کہ جماعت اسلامی کی جانب سے یوم استحصال کشمیر کے سلسلے میں ریلی نکالی جارہی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں