The news is by your side.

Advertisement

سنسنی خیز مقابلے کے بعد کوئٹہ گلیڈی ایٹرز فتح‌ یاب

دبئی: کراچی کنگز اور کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے درمیان سنسنی خیز مقابلے کے بعد سرفراز الیون نے کراچی کنگز کو 7 وکٹوں سے شکست دے دی۔

تفصیلات کے مطابق دبئی میں جاری پاکستان سپرلیگ کے تیسرے روز کے دوسرے میچ میں کوئٹہ کے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیت کر کراچی کنگز کو بیٹنگ کی دعوت دی۔

کراچی کنگز نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 20 اوورز میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو جیت کے لیے 160 رنز کا ہدف دیا، گلیڈی ایٹرز کی ابتدا اچھی نہ تھی، تین وکٹوں کے نقصان پر سرفراز اور روسو نے بیٹنگ لائن کو سہارا دے کر 130 رنز کی پارٹنر شپ کی جس کی بدولت اُن کی ٹیم کو فتح حاصل ہوئی۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز اننگز اوور بائی اوور

بیسویں اوور کی پہلی بال پر روسو نے باؤنڈری مار کر اپنی ٹیم کو فتح دلوائی۔ انیسویں اوور میں مجموعی اسکور 156 رہا ، سترہویں اوور میں 142 جبکہ اٹھارویں اوور میں مجموعی اسکور 150 رنز تک پہنچا۔

چودہویں اوور میں 111 ، پندرہویں 118 ، سولہویں اوور میں مجموعی 129 رنز بنے، تیرہویں اوور میں 6 رنز اضافہ ہوا جس کے بعد اسکور 103 تک پہنچا۔بارہویں اوور کی پانچویں بال پر روسو نے ایک رن لے کر 30 بالز کا سامنا کرتے ہوئے نصف سنچری مکمل کی، اوور کے اختتام پر مجموعی اسکور 97 تک پہنچ گیا۔

شعیب ملک نے اننگز کا گیارہواں اوور پھینکا جس میں ایک چوکے کی مدد سے 9 رنز کا اضافہ ہوا۔ دسویں اوور میں مجموعی اسکور میں چار رنز کا اضافہ ہوا۔ نویں اوور میں نوبال کا بھرپور فائدہ اٹھاتے ہوئے روسو نے ایک چھکا مارا جبکہ آخری بال کو قدموں کا استعمال کرتے ہوئے باؤنڈری کے پار پھینک کر 19 رنز حاصل کیے جس کے بعد کوئٹہ کا مجموعی اسکور 74 ہوگیا۔

آٹھویں اوور میں 6 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 55 ہوگیا۔ ساتویں اوور میں مجموعی اسکور 49 تک پہنچ گیا۔ کراچی کنگز کی جانب سے چھٹا اوور محمد عامر نے کیا اور 9 رنز اضافے کے بعد اسکور 39 ہوگیا۔ پانچواں اوور سہیل خان نے کیا تو اسد شفیق اُن کی بال کھیلنے میں ناکام رہے اور آف سائیڈ پر شعیب ملک کے ہاتھوں میں کیچ دے گئے، 2 رنز اضافے کے بعد کوئٹہ کا مجموعی اسکور 31 تک پہنچا۔

a2

چوتھے اوور میں 7 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 30 ہوگیا۔ تیسرے اوور کی پانچویں بال کو احمد شہزاد سمجھنے سے قاصر رہے اور وہ سہیل خان کی بال پر پولارڈ کے ہاتھوں آسان کیچ تھما کر پویلین روانہ ہوئے انہوں نے 6 بالز پر 11 رنز اسکور کیے جس میں 1 چھکا اور 1 چوکا بھی شامل تھا تاہم اگلی ہی بال پر کیوین پیٹرسن بھی بغیر رن بنائے سہیل خان کا نشانہ بنے۔ سہییل خان کا پہلا اور اننگز کا تیسرا اوور کراچی کنگز کے لیے اچھا ثابت ہوا۔ اننگز کے دوسرے اور عماد وسیم کے پہلے اوور میں کوئٹہ نے بغیر کسی نقصان پر مجموعی 13 رنز اسکور کیے۔

ہدف کے تعاقب میں کوئٹہ کی جانب سے اننگز کا آغاز احمد شہزاد اور اسد شفیق نے کیا اور محمد عامر کے پہلے اوور میں بغیر کسی نقصان پر 6 رنز بنائے۔

 کراچی کنگز اننگز

بیسویں اوور کی تیسری بال پر روی بھوپارا آؤٹ ہوکر پویلین روانہ ہوئے، اوور کے اختتام پر مجموعی اسکور 159 تک پہنچا۔

انیسویں اوور کی پہلی بال پر بابر اعظم نے چھکا مار کر اپنی ففٹی مکمل کی تاہم اگلی ہی بال پر رن آؤٹ ہوکر پویلین لوٹے، بابر اعظم نے 42 بالز کا سامنا کرتے ہوئے 4 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے نصف سنچری مکمل کی۔

اٹھارہویں اوور 11 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 134 ہوا۔

سترہویں اوور میں کراچی کنگز کے ایک اور کھلاڑی شعیب ملک کو وکٹ سے ہاتھ دھونا پڑے جس کے بعد 5 وکٹ کے نقصان پر مجموعی اسکور 123 تک پہنچا۔

سولہویں اوور میں 9 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 114 ہوا۔

پندرہویں اوور کی تیسری بال پر پولارڈ ایک چھکا مارنے کے بعد دوبارہ گیند کو باؤنڈری تک پھیکنے میں ناکام رہے اور کیچ تھما کر پویلین لوٹے تاہم یہ اوور کراچی کنگز کے لیے اچھا ثابت ہوا اور 18 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 105 تک پہنچا۔

چودہویں اوور میں ایک رن کے اضافے کے ساتھ اسکور 87 ہوا۔

تیرہویں اوور کے اختتام پر مجموعی اسکور 86 رنزبنے جبکہ باروہیں اوور کی چوتھی بال پر کمار سنگا کارا پریرا کی بال کو باؤنڈری کی طرف پھینکنے کی ناکام کوشش کرتے ہوئے وکٹ گنواں بیٹھے، اوور کے اختتام پر 5 رنز اضاضے کے بعد تین وکٹ کے نقصان پر مجموعی اسکور 80 تک پہنچا۔

گیارہویں اوور میں 11 رنز کے اضافے کے بعد مجموعی اسکور 75 ہوا جبکہ دسویں اوور میں کمار سنگاکارا کے چھکے کی بدولت اسکور میں 9 رنز کا اضافہ ہوا جس کے بعد دو وکٹ کے نقصان پر مجموعی اسکور 64 تک پہنچا۔

نویں اوور میں 9 رنز کا اضافے کے بعد مجموعی اسکور 55 ہوا، آٹھویں اوور کے اختتام پر مجموعی اسکور میں 4 رنز کا اضافہ ہوا جس کے بعد مجموعی اسکور 46 ہوا

ساتویں اوور کے اختتام پر پانچ رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 42 ہوا، چھٹے اوور کی تیسری بال پر کرس گیل 10 رنز بنانے کے بعد پریرا کی گیند پر انہی کو گیچ دے کر پویلین روانہ ہوئے، 6 اوور میں 4 رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 37 تک پہنچا۔

پانچویں اوور میں چار رنز اضافے کے بعد مجموعی اسکور 34 تک پہنچا، چوتھے اوور کی چوتھی بال پر شاہ زیب حسن ملز کا نشانہ بنے جبکہ مجموعی اسکور 30 ہوا، انور علی کے تیسرے اوور میں کرس گیل کے ایک چھکے اور ایک چوکے کی مدد سے ایک اوور میں 12 رنز بنے۔

دوسرے اوور میں ملز نے دو رنز دیے۔

اننگز کا پہلا اوور انور علی نے کروایا جس میں بغیر کسی نقصان کے پانچ رنز بنے

 ٹاس کے بعد گفتگو کرتے ہوئے کراچی کنگز کے کپتان کمار سنگا کارا نے کہا کہ گزشتہ روز میچ میں ہونے والی خامیوں سے سیکھنے کے بعد آج کا میچ جیتنے کی کوشش کریں گے۔

qg-kk-toss

کوئٹہ گلیڈی ایٹر کے کپتان نے کہا کہ امید ہے میچ میں بلے باز اچھی کارکردگی دکھائیں گے اور ہماری ٹیم فتح کے سلسلے کو جاری رکھے گی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں