The news is by your side.

Advertisement

کراچی: کورنگی میں‌ پولیس اہلکاروں‌ کی فائرنگ سے میاں‌ بیوی زخمی، اسپتال منتقل

کراچی: شہر قائد کے علاقے کورنگی میں پولیس اہلکاروں کی فائرنگ سے میاں بیوی زخمی ہوئے جنہیں طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جبکہ خاتون کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے کورنگی نمبر 4 میں پولیس اہلکاروں کی فائرنگ سے میاں بیوی زخمی ہوگئے، ایمرجنسی انچارج جناح اسپتال سیمی جمالی کے مطابق فائرنگ سے زخمی خاتون حاملہ ہے اور اس کی حالت تشویش ناک ہے۔

ایمرجنسی انچارج جناح اسپتال سیمی جمالی کے مطابق زخمی خاتون کو آپریشن تھیٹر میں طبی امداد دی جارہی ہے جبکہ شوہر عدنان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

آئی جی سندھ نے ایس ایس پی کورنگی سے واقعے کی تفصیلی انکوائری رپورٹ طلب کرلی

اسپتال ذرائع کے مطابق فائرنگ سے زخمیوں کی شناخت عدنان اور ثاقبہ کے ناموں سے ہوئی ہے، زخمی عدنان کے سر پر اور اہلیہ ثاقبہ کو پسلی میں گولی لگی ہے۔

ایس ایس پی کورنگی کے مطابق فائرنگ کے واقعے کی تحقیقات کررہے ہیں، میاں بیوی مقابلے میں ملزمان کی فائرنگ سے زخمی ہوئے ہیں۔

میاں بیوی کے فائرنگ سے زخمی ہونے پر پولیس نے وضاحت پیش کی ہے کہ موٹر سائیکل سوار پولیس اہلکار مشتبہ افراد کا تعاقب کررہے تھے، پولیس اہلکاروں کا کہنا ہے کہ میاں بیوی ملزمان کی فائرنگ سے زخمی ہوئے ہیں۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز سلمان لودھی کے مطابق فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والے عدنان اور ثاقبہ گھر کے کہیں جانے کے لیے نکلے تھے کہ فائرنگ کی زد میں آگئے۔

دوسری جانب آئی جی سندھ سید کلیم امام نے کورنگی میں فائرنگ سے میاں بیوی کے زخمی ہونے کا نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی کورنگی سے تفصیلی انکوائری رپورٹ طلب کرلی ہے۔

پولیس اہلکاروں کی غفلت سامنے آگئی

کورنگی میں فائرنگ کے واقعے پر پولیس اہلکاروں کی غفلت سامنے آگئی، ایس ایس پی کورنگی کے مطابق مسلح ملزمان پولیس اہلکاروں کی سرکاری ایس ایم جی چھین کر فرار ہوئے، ایک پولیس اہلکار نے مزاحمت کی اور دو طرفہ فائرنگ ہوگئی۔

ایس ایس پی کورنگی نے کہا کہ جائے وقوعہ سے ایک خول ملا ہے جس کی تحقیقات کررہے ہیں، ملزمان سرکاری اسلحہ پھینک کر فرار ہوئے جو برآمد کرلیا گیا، خاتون کو کس ہتھیار کی گولی لگی تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے۔

ایس ایس پی کورنگی علی رضا کے مطابق پولیس اہلکاروں کو گن کر گولیاں دی جاتی ہیں، غفلت برتنے والے اہلکار زیر حراست، بیان ریکارڈ کیا جارہا ہے، زخمی خاتون کی حالت تشویش ناک ہے۔

عینی شاہد شفقت زرین کی گفتگو

کورنگی میں فائرنگ کے واقعے کے عینی شاہد شفقت زرین نے کہا کہ بہن اور بہنوئی پولیس اہلکاروں کی فائرنگ سے زخمی ہوئے، بہن اور بہنوئی جیسے ہی گھر سے باہر نکلے فائرنگ کی آواز آئی، ایک گولی مجھے بازو کے قریب سے چھوتے ہوئے نکلی۔

شفقت زرین کا کہنا تھا کہ پولیس اہلکار بھاگ کر ہم تک پہنچے اور ادھر ادھر دیکھتے رہے، گلی میں ایسا کوئی نظر نہ آیا جس کا پولیس اہلکار تعاقب کررہے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں