نئی پالیسی سے کرائے بڑھیں گے، شادی ہالز مالکان karachi marriage hall
The news is by your side.

Advertisement

نئی پالیسی سے کرائے بڑھیں گے، عوام متاثر ہوں گے، شادی ہالز مالکان

کراچی: کراچی میرج ہال، لان اینڈ بینکوئٹ اونر ایسوی ایشن نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کی نئی میرج لان پالیسی پر کہا ہے کہ اس پالیسی سے شادی ہالوں کے کرایوں میں اضافے کا خدشہ ہے اور نئی پالیسی کے تحت کم آمدنی والے اور چھوٹی تقریب کرنے والے افراد سب زیادہ متاثر ہوں گے۔

ایسوی ایشن کے جنرل سیکریٹری راجہ طارق کا کہنا تھا کراچی میں 650 سے 700 شادی ہال ہیں جس میں 450 شادی ہال ایسوی ایشن کے ممبر ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نئی پالیسی پر انہیں تحفظات ہیں جس کے حوالے سے جلد سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سے ملاقات کی جائے گی ، تمام میرج ہالز سوشل سیکیورٹی،انکم ٹیکس،ای او بی آئی ،پروفیشنل ٹیکس اور دیگر کروڑوں روپے کے ٹیکس ادا کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نئی پالیسی میں 2 ہزار گز کے پلاٹ کی شرط پر صرف پچاس میرج ہالز ہی ملیں گے جبکہ اگر مستقبل میں اسی پالیسی پر عمل درآمد کیا گیا تو نہ صرف نئے شادی ہالز نہیں بنیں گے بلکہ ان کے کرایوں میں اضافہ ہوجائے گا اور چھوٹی تقریب کرنے والوں اورکم آمدنی والوں کے لیے شادی کرنا اور مشکل ہوجائے گا۔

راجہ طارق نے بتایا کہ نئی پالیسی کے تحت 150 فٹ روڈ پر موجود ہالز کمرشل سرکاری فیس اد ا کرکے اپنے رہائشی پلاٹ پر قائم شادی ہال کو کمرشل بنیادوں پر استعما ل کرسکتے ہیں جس کے تحت شادی ہال کو کم از کم 6 سے 8 ہزار روپے گز قیمت ادا کرنی ہوگی جس کے تحت چھ سو گز کے پلاٹ والے شادی ہال کو کم از کم 36 لاکھ ادا کرنے ہوں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمیں یقین ہے کہ نئی پالیسی کے تحت پہلے سے موجود شادی ہالوں کو تنگ نہیں کیا جائے گا اور دو ہزار گز کی شرط کے حوالے سے جلد ایسوی ایشن کا وفد سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے حکام سے ملاقات کرے گا۔

اس وقت شہر میں صرف بیس سے پچیس فیصد ہالز ریگوالرائز ہیں ایس بی سی اے سے معاملات طے نہ ہوئے تو کیا ایسوی ایشن کورٹ جانے میں اس فیصلے کو چیلنج کرے گی اس سوال کے جواب میں خواجہ طارق کا کہناتھا کہ اس طرح کے تمام فیصلے ایم سی اجلاس میں کیے جاتے ہیں تاہم انہیں امید ہے کہ اس کو نوبت نہیں آئے گی۔

دوسری جانب شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت کے اس اقدام سے عوام کا ہی نقصان ہو گا کیونکہ شادی ہال والے اس تمام ہرجانے کا ملبہ عوام پر ڈال کر شادی ہال کے کرایوں میں اضافہ کر دیں گے، حکومت سرکاری فیس کی وصولی کرے لیکن عوام کے لیے ان شادی ہال مالکان کو پابند کرے اور شادی ہال کے کرایوں میں بھی کمی کا کوئی کام کرے۔

اسی سے متعلق: شادی ہالز سے متعلق سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کا نیا ضابطہ اخلاق

خیال رہے کہ سندھ بلڈنگ کنٹرل اتھارٹی (ایس بی سی اے) نے شادی ہالوں کے لیے نیا ضابطہ اخلاق جاری کرتے ہوئے تمام مالکان کو ہدایت کی ہے کہ رفاہی پلاٹوں پر قائم شادی ہالز ختم کیے جائیں ورنہ انہیں مسمار کردیا جائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں