بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی کیخلاف ایم کیو ایم کا احتجاجی مظاہرہ -
The news is by your side.

Advertisement

بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی کیخلاف ایم کیو ایم کا احتجاجی مظاہرہ

کراچی : عوامی مسائل ، بلدیاتی اختیارات، پانی کی عدم فراہمی اور بجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف ایم کیو ایم کے زیر اہتمام احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔

اس موقع پر مظاہرین نے ہاتھوں میں بینرز اٹھائے ہوئے تھے، مشتعل مظاہرین نے سندھ حکومت کے خلاف شدید نعرے بازی بھی کی۔

یونیورسٹی روڈ پر ہونے والے احتجاجی مظاہرے سے متحدہ رہنماؤں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عوام کو ایک طرف طالبان مار رہے ہیں تو دوسری طرف سندھ حکومت پیاسا ما رہی ہے،اختیارات نہ ملے تو چھینا بھی جانتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ لگتا ہے حکومت نے کراچی کو گروی رکھ دیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سول نافرمانی شروع ہوئی تو حکومت کیلئے صورتحال پر قابو پانا مشکل ہو جائے گا۔

وزیر اعلیٰ کا بس چلے تو عوام سے سانس لینے کا اختیار بھی لے لیں، انہوں نے کہا کہ خدارا تعصب کا برتاؤ بند کیا جائے۔

ایم کیوایم رہنماؤں کا کہنا تھا کہ نااہل سندھ حکومت کو مستعفی ہو جانا چاہئیے،جمہوریت کے نام پر لوگوں سے مذاق کیا جارہا ہے۔

متحدہ رہنماؤں اور نو منتخب بلدیاتی امیدوراوں کا کہنا تھا کہ اگر اختیارات نہ ملے تو سندھ اسمبلی کا گھیراؤ بھی کیا جاسکتا ہے۔

اس موقع پر نامزد ڈپٹی مئیر، اپوزیشن لیڈر، متحدہ کارکنان ، منتخب بلدیاتی نمائندے اورعوام کی بڑی تعداد موجود تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں