The news is by your side.

Advertisement

پولیس کو تاحال دعا زہرہ کو زبردستی لے جانے کے شواہد نہ مل سکے، پولیس کا کلیو ہونے کا انکشاف

کراچی: پولیس کو تاحال دعا زہرہ کو زبردستی لے جانے کے شواہد نہ مل سکے، تاہم اے آئی جی کراچی نے کلیو ہونے کا انکشاف بھی کر دیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق کراچی میں الفلاح کے علاقے گولڈن ٹاؤن سے 8 روز سے لاپتا لڑکی دعا زہرہ سے متعلق ایڈیشنل آئی جی کراچی غلام نبی میمن نے فون پر بتایا کہ ان کی بازیابی کے لیے کراچی پولیس اپنی ہر ممکن کوشش کر رہی ہے۔

غلام نبی میمن کا کہنا تھا کہ ہر زاویے سے تفتیش کی جا رہی ہے کہ اگر کوئی مسنگ لنک ہے تو اسے بھی تلاش کیا جا سکے، انھوں نے انکشاف کیا کہ پولیس اس معاملے میں کلیو لیس نہیں ہے۔

ایف آئی اے سائبر کرائم ٹیم کا دعا زہرہ کے گھر کا جائزہ ، اہلخانہ سے سوالات

اے آئی جی نے کہا کہ پولیس دعا زہرہ کی بازیابی کے لیے ہر ممکن کوشش اور تمام جدید ذرائع استعمال کر رہی ہے، تاہم ان کا کہنا تھا کہ اس طرح کے حساس معاملے کو زیادہ اٹھانے سے تفتیش پر اثر پڑ جاتا ہے۔

غلام نبی میمن نے یہ بھی کہا کہ بچی کو زبردستی لے جانے کو نظر انداز نہیں کر سکتے لیکن اب تک ایسا کچھ پتا نہیں چل سکا ہے، تاہم پولیس کلیو لیس بھی نہیں ہے۔

کراچی سے اغوا ہونے والی دعا زہرہ سے منسوب ویڈیو غلط نکلی، ایس ایچ او معطل

انھوں نے کہا بچی کا لا پتا ہو جانا انتہائی تکلیف دہ بات ہے، ہماری ہر مکمن کوشش ہے کہ جلد بازیاب ہو۔

Comments

یہ بھی پڑھیں