site
stats
سندھ

کراچی میں ڈاکو بے قابو، یومیہ180 وارداتیں، شہری قیمتی سامان سے محروم

street crimes

کراچی : عزیز آباد میں پیدل آنے والے مسلح ڈاکو موٹر سائیکل چھین کر فرار ہوگئے، شہر میں یومیہ اسٹریٹ کرائم کی180وارداتیں ہورہی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں دن دہاڑے سڑکوں پر لوٹ مار روز کا معمول بن گیا ہے، شاید ہی کوئی کراچی کا شہری ہو جو اپنی زندگی میں کم ازکم ایک بار اسٹریٹ کرائم کا شکار نہ ہوا ہو۔

اے آر وائی کو موصول ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ شہر کے متوسط طبقے کے علاقہ حسین آباد میں ایک ملزم بہت سکون سے ٹہلتا ہوا آیا۔

ویڈیو دیکھیں

ٹی ٹی پستول دکھا کر دو موٹر سائیکل سوار افراد کو روکا، ان سے بائیک سے اترنے کیلئے کہا اور موٹر سائیکل اسٹارٹ کر کے جانے ہی لگا تھا کہ لٹنے والوں نے کچھ دور جاکر اس پر پتھرپھینکے۔

ملزم غصے میں موٹرسائیکل سےاترا اور ٹی ٹی سے چند فائر کیے اورانتہائی اطمینان سے موٹرسائیکل اسٹارٹ کرکے چلتا بنا۔


مزید پڑھیں: اسٹریٹ کرائمز سے بچنے کے لیے یہ تدابیر اپنائیں


قریب ہی عزیزآباد میں سی سی ٹی وی کیمرے نےایک اور واردات ریکارڈ کی، گھرکے باہرنوجوان گپ شپ کررہے تھے کہ دو موٹر سائیکل پر چار ڈاکوآئے،انہیں اسلحہ دکھا کر دھمکایا، ان سے موبائل ہتھیائے، جیبیں صاف کیں اورباآسانی فرار ہوگئے۔


مزید پڑھیں: کراچی، اسٹریٹ کرائم، شہری ڈاکوؤں کے رحم و کرم پر


واضح رہے کہ شہر کراچی میں ہرروز اسٹریٹ کرائمز کی ایک سواسی سے بھی زیادہ وارداتیں ہورہی ہیں، اب تک مزاحمت پر بیس سے زائد افراد قتل کردیئےگئے، سب سےزیادہ وارداتیں گلشن اقبال میں ہوئیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top