The news is by your side.

Advertisement

کراچی: مسلح افراد کی سابق گورنرسندھ محمدزبیر کو روکنے کی کوشش، تحقیقات شروع

کراچی: شہرقائد میں مسلح افراد نے سابق گورنرسندھ محمدزبیر کو گھر جاتے ہوئے روکنے کی کوشش کی، پولیس نے تحقیقات شروع کردی۔

تفصیلات کے مطابق سابق گورنر سندھ محمد زبیر اپنی اہلیہ کے ساتھ گاڑی میں گھر جارہے تھے کہ کراچی کے پوش علاقے ڈیفنس فیز6 میں کار سوار افراد نے انہیں روکنے کی کوشش کی۔

اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے محمد زبیر کا کہنا تھا کہ سفید کرولا کار میں سوار ملزمان نے میری گاڑی کو بلاک کیا، کار میں 2سے3 ملزمان سوار تھے، کار سوار ایک ملزم نے مجھ پر اسلحہ بھی تانا، مسلح افراد کو ديکھ کر گاڑی بھگا دی۔

انہوں نے کہا کہ ملزمان مجھے نشانہ بنانا چاہ رہے تھے یا ڈرانا، علم نہیں، ملزمان نے شاید لوٹنے کی غرض سے روکنے کی کوشش کی، دہشت گردی کے حوالے سے میں کھل کربات کرتا رہا ہوں، مجھے 3، 4 سال سے دھمکیاں مل رہی تھیں، گھر والے نہ گھبرائیں تو کبھی سیکیورٹی نہ لوں۔

سابق گورنر سندھ کا کہنا تھا کہ علی رضاعابدی کے قتل کے بعد سیکیورٹی خدشات بڑھ گئے ہیں، میں نے نہ سیکیورٹی مانگی ہے اور نہ مجھے دی گئی ہے، طالبان اور داعش کے خلاف کھل کربولتا ہوں، جب آپ کے پاس عوامی عہدہ ہو تو دھمکیاں ملتی رہتی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ متعلقہ پولیس کو واقعے کی اطلاع کردی ہے، وزیر اعلیٰ سندھ سے رابطہ ہوا ہے، ان کو واقعے سے متعلق بتا دیا ہے، واقعے سے متعلق معلومات کیلئے پولیس اہلکار گھر پہنچے ہیں، اگر ادارے سمجھتے ہیں مجھے سیکیورٹی کی ضرورت ہے تو دی جائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں